پشاور میں غصہ کا شکار ماں نے 5 سالہ بچی کو واشنگ مشین میں ڈال کر مار دیا

پشاور میں غصہ کا شکار ماں  نے 5 سالہ بچی کو واشنگ مشین میں ڈال کر مار دیا

خیرپختونخوا کے دارالحکومت پشاور کے نواحی علاقے داؤدزئی میں ماں نے ضد کرنے پر اپنی پانچ سالہ بچی دعا کو واشنگ مشین میں بند کر دیا۔ بچی دم گھٹنے سے انتقال کر دئی۔

پشاور پولیس نے افسوسناک واقعہ کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ والدہ کے غصہ کا نشانہ بن کر جاں بحق ہونے والی بچی کے متعلق اس کے بھائی عادل نے اطلاع دی تھی۔

بچی کے بھائی کے مطابق اس کی پانچ سالہ بہن دعا والدہ کے ساتھ ہمسائیوں کے گھر جانے کی ضد کر رہی تھی۔ بچی کی ضد پر غصہ میں آئی ہوئی ماں نے اس کی بہن کو واشنگ مشین میں بند کردیا جس کی وجہ سے ننھی دعا کی موت واقع ہوگئی۔

یہ بھی پڑھیں: آج کل کی لڑکیاں کیسا جیون ساتھی چاہتی ہیں؟

شکایت درج کرائے جانے کے بعد کارروائی کرتے ہوئے تھانہ داؤدزئی پولیس نے گھر پر چھاپہ مارا تو علم ہوا کہ بچی کی والدہ اپنے آبائی گھر چراٹ فرار ہو گئی ہے۔

ایس ایچ او تھانہ داؤدزئی عمران اللہ کے مطابق خاتون کی گرفتاری کے لیے لیڈیز پولیس اہلکاروں کو شامل کر کے ٹیم تشکیل دی گئی ہے۔

مزید پڑھیں: صدمے یا خدشے سے پیٹ میں گرہیں کیوں پڑھتی ہیں؟

اسی دوران پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے حقائق چھپانے کے الزام کے تحت بچی کے والد کو گرفتار کیا ہے۔

پولیس نے بچی کے والد فضل ریحان کوحراست میں لے کر تھانہ منتقل کر دیا ہے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *