پیسکو کی جانب سے بجلی بند نہ کرنے کے دعوے جھوٹے!

پیسکو کی جانب سے بجلی بند نہ کرنے کے دعوے جھوٹے!

پشاور: پشاور الیکٹرک سپلائی کمپنی کی جانب سے صوبے بھر میں بجلی بند نہ کرنے کے اعلان کر مختلف اضلاع کے مکینوں کی جانب سے جھٹلایا گیا ہے۔

پیر کے روز پیسکو کی جانب سے میڈیا کے لیے جاری کردہ خبر میں دعوی کیا گیا تھا کہ لوڈشیڈنگ فری رمضان اور عید کے بعد اب ملک کے دیگر حصوں کی طرح خیبر پختونخوا میں بھی معمول کے مطابق لوڈمنیجمنٹ شروع کردی گئی ہے۔ پیسکو ترجمان کی جاری کردہ خبر کی فوری تردید اس وقت سامنے آئی جب مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے افراد نے اسے خلاف حقائق قرار دے ڈالا۔

اپنے اعلان میں پیسکو کا کہنا تھا کہ بیشتر فیڈرز پر زیرو لوڈ مینجمنٹ ہے جبکہ زیادہ خسارے والے علاقوں میں خسارے کے تناسب سے لوڈ مینجمنٹ کی جاتی ہے۔

یہ دعوی بھی کیا گیا تھا کہ صوبے کے کسی حصے میں بھی طویل یا غیر اعلانیہ لوڈ مینیجمنٹ نہیں کی جاتی۔ اس کے ساتھ ہی وضاحت کی گئی کہ بجلی کے نظام میں آنے والے کسی بھی فالٹ کو لوڈشیڈنگ /لوڈمنیجمنٹ نہ سمجھا جائے۔

پیسکو ترجمان کا یہ بھی کہنا تھا کہ مرمت کے لیے بجلی کی بندش، لوڈشیڈنگ نہیں ہوتی۔

خبر سامنے آتے ہی پشاور، چارسدہ، ہری پور اور ایبٹ آباد سمیت دیگر اضلاع کے متعدد مکینوں نے اسے جھوٹ قرار دیتے ہوئے کہا کہ زمینی حقائق کچھ اور ہیں۔

پشاور کے علاقے حیات آباد فیز 7 کی صورت حال بتاتے ہوئے طارق خان نے شہری کا کہنا تھا کہ یہاں رمضان سے قبل لوڈ شیڈنگ نہیں تھی، رمضان میں بجلی کی بندش شروع کی گئی ہے جو اب تک برقرار ہے۔

ہری پور سے وسیم تنولی نامی شہری نے بتایا کہ رمضان کے دوران اور اب بھی غیر اعلانیہ طور پر بجلی کی بندش کا سلسلہ جاری ہے۔ شہری علاقوں میں کسی بھی وقت غیر معین وقت کے لیے بجلی بند کر دی جاتی ہے جب کہ رمضان اور عید کی تعطیلات کے دوران دیہی علاقوں میں پانچ تا سات گھنٹے یومیہ بجلی بند رکھی جاتی رہی ہے۔

چارسدہ نے شاہد خان نامی صارف کا کہنا تھا کہ گزشتہ روز سے ہر دو گھنٹے بعد بجلی بند کی جا رہی ہے۔ گزشتہ شب 12 بجے سے صبح چھ بجے تک بجلی بند رکھی گئی ہے۔

ایبٹ آباد سے مشتاق احمد نامی صارف نے پیسکو کے دعوی کو جھٹلاتے ہوئے کہا کہ شہر کے مرکزی رہائشی و تجارتی علاقوں میں رمضان کے دوران اور اب بھی بجلی کی بندش کا سلسلہ جاری ہے۔ بغیر کسی پیشگی اطلاع کے گھنٹوں بجلی بند رہنا معمول ہے۔

خیبرپختونخوا کے متعدد بجلی صارفین نے پیسکو ترجمان شوکت علی کو خبر جاری کرنے کے بعد تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ادارے کو حقائق جھٹلانے کے بجائے اپنی خدمات کا معیار بہتر کرنے پر توجہ دینی چاہیے۔

یاد رہے کہ عید کی تعطیلات سے قبل پیسکو کی جانب سے اپنے ہیڈکوارٹرز میں خصوصی سیل فعال کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا گیا تھا کہ بجلی کی بلاتعطل فراہمی یقینی بنائی جائے گی، صارفین سے کہا گیا تھا کہ اگر کسی مقام پر بجلی کی شکایت ہو تو دیے گئے نمبروں پر رابطہ کر کے صورت حال متعلقہ حکام کے علم میں لائی جائے۔

فوزان شاہد

مطالعہ اور لکھنے کا عمدہ ذوق رکھنے والے فوزان شاہد پاکستان ٹرائب کے ڈپٹی ایڈیٹر ہیں۔ وہ سیکیورٹی ایشوز سمیت سماجی، علاقائی اور بین الاقوامی امور پر لکھتے ہیں۔ Twitter: @FawzanShahid

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *