انٹرنیٹ پر لڑکی کی فراڈیئے سے دوستی، زندگی کی سب سے بڑی خوشی بن گی \ pakistantribe.com/rdu

انٹرنیٹ پر لڑکی کی فراڈیئے سے دوستی، زندگی کی سب سے بڑی خوشی بن گی

لندن :  برطانیہ میں ایک لڑکی کو انٹرنیٹ پر ایک فراڈیئے سے محبت ہو گئی لیکن جب حقیقت کھلی تو یہ فراڈیہ اس کے لیے زندگی کی سب سے بڑی خوشی کا سبب بن گیا۔

دی مرر کی رپورٹ کے مطابق ایما پیریئر نامی یہ لڑکی فرانسیسی شہری ہے لیکن برطانیہ میں مقیم ہے، اس کی انٹرنیٹ پر روہنی نامی لڑکے سے ملاقات ہوئی اور دونوں کو ایک دوسرے سے محبت ہو گئی۔

 کئی مہینے گزر گئے دونوں روزانہ بات کرتے تھے لیکن جب بھی ایما اسے ملنے کو کہتی وہ ٹال دیتا، پھر ایک روز ایما نے اس کی ایک تصویر ایپلی کیشن پر دیکھی اور اسے معلوم ہوا کہ اس نے جو تصاویر بھی اسے بھیجی تھی وہ دراصل ایک ترک ماڈل آدم گوزیل کی تھیں۔

 کچھ اور تحقیق کرنے پر ایما کو پتہ چلا گیا کہ روہنی فراڈیہ ہے۔ اس کی عمر 53سال ہے اور اس کا اصل نام ایلن سٹینلے ہے۔

اس انکشاف پر ایما کو بہت صدمہ ہوا تاہم اس نے خود کو سنبھال لیا اور آدم گوزیل کا سوشل میڈیا اکاﺅنٹ تلاش کرکے اسے پیغام بھیجا کہ اس کی تصاویر ایلن لڑکیوں کو پھانسنے کے لیے استعمال کر رہا ہے۔

 یہیں سے نوجوان، خوبرو ماڈل آدم اور ایما کی بات چیت شروع ہو گئی اور دونوں ایک دوسرے سے محبت کرنے لگے۔

کچھ دنوں بعد آدم اس سے ملنے برطانیہ گیا اور اب دونوں ایک ساتھ رہ رہے ہیں۔

 ایما کا کہنا ہے کہ یہ سب اس فراڈیئے ایلن کی وجہ سے ہوا، ہمیں یقینا اس کا شکریہ ادا کرنا چاہیے کہ وہ ہمیں ملانے کا سبب بنا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں