چین میں واٹس ایپ پر پابندی لگا دی گئی

چین میں واٹس ایپ پر پابندی لگا دی گئی

بیجنگ: دنیا بھر میں معروف ویب سائٹس کے متبادل مقامی ویب سائٹس رکھنے کی انفرادیت کے حامل ملک چین نے سب سے بڑی موبائل ایپلیکیشن واٹس ایپ کے استعمال پر پابندی عائد کر دی ہے۔

پاکستان ٹرائب اردو سروس کو چینی میڈیا سے دستیاب اطلاعات کے مطابق اسمارٹ فونز کے علاوہ ویب ورژن کی وجہ سے پیغام رسانی کی معروف سروس واٹس ایپ کے استعمال پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔

یہ پابندی ایک ایسے وقت میں سامنے آئی ہے جب چین پہلے ہی سوشل میڈیا ویب سائٹ فیس بک اور مقبول موبائل ایپلیکیشن انسٹاگرام کو بلاک کر چکا ہے۔

چین میں موجود بعض صارفین نے ٹوئٹر پر اپنے پیغامات میں لکھا ہے کہ گزشتہ ہفتے سے وہ واٹس ایپ تک رسائی حاصل نہیں کر پارہے اور غیر اعلانیہ بندش سے انہیں پریشانی کا سامنا ہے۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ 19ستمبر سے واٹس ایپ صارفیں کی بڑی تعداد پیغام رسانی کی اس سہولت سے محروم ہے جب کہ چینی حکومت نے ایک ہفتہ گزرجانے کے باوجود باضابطہ طور پر واٹس ایپ کو بند کرنے کا اعلان نہیں کیا ہے۔

چین کی جانب سے اعلانیہ یا غیر اعلانیہ پابندی کا شکار ہونے والے دونوں ایپلیکیشنز واٹس ایپ اور انسٹاگرام سوشل نیٹ ورکنگ پلیٹ فارم فیس بک کی ملکیت ہیں۔

قبل ازیں چین میں امریکی سوشل میڈیا ویب سائٹس کے علاوہ انٹرنیٹ سرچ انجن گوگل اور اس کی تمام سروسز بھی معطل کی جاچکی ہیں۔

پاکستان ٹرائب ٹیکنالوجی ڈیسک کے مطابق روس نے بھی منگل کو اعلان کیا ہے کہ وہ آئندہ برس تک فیس بک پر پابندی عائد کر دے گا۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *