عامر لیاقت میانمار ایڈونچر کے بعد واپس پہنچ گئے

عامر لیاقت میانمار ایڈونچر کے بعد واپس پہنچ گئے

اسلام آباد: روہنگیا مسلمانوں کی مدد کی غرض سے برما گئےمعروف اینکر پرسن  ڈاکٹر عامر لیاقت حسین اور وقار ذکا کو ڈی پورٹ کردیا گیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق عامر لیاقت حسین اور وقار ذکا روہنگیا مسلمانوں کی مدد کیلئے میانمار گئے تھے جہاں انہیں ہفتہ کے روز گرفتار کرلیا گیا تھا۔

اب سوشل میڈیا پر افواہیں گردش کر رہی ہیں کہ میانمار کی حکومت نے دونوں اینکرز کو واپس پاکستان ڈی پورٹ کردیا ہے اور وہ خیریت سے گھر واپس پہنچ گئے ہیں۔

 اس سے پہلے ادھر نجی ٹی وی کے مشہور و معروف کرائم جرنلسٹ اقرارالحسن کی میانمار میں پولیس کسٹڈی سے متعلق خبریں بے بنیاد نکلیں۔

اے آر وائی نیوز کے کرائم جرنلسٹ اقرار الحسن میانمار کے علاقے رخائن میں پہنچ گئے جہاں وہ اپنی ٹیم کے ہمراہ صحافتی خدمات ادا کر رہے ہیں جبکہ ان کی دوسری ٹیم کو ویزہ ہونے کے باوجود ڈی پورٹ کر دیا گیا۔

نجی نیوز چینل اے آر وائی نیوز کی دوسری ٹیم کو ویزہ ہونے کے باوجود آٹھ گھنٹے حراست میں رکھنے کے بعد پاکستان واپس بھیج دیا گیا۔

دوسری طرف نجی ٹی وی بول نیوز کے اینکرپرسن عامر لیاقت اور وقار ذکا کے بارے میں بھی سوشل میڈیا پر افواہیں گردش کر رہی ہیں کہ وہ بھی میانمار گئے تھے تاہم انہیں امیگریشن حکام نے چھ گھنٹے حراست میں رکھنے کے بعد ڈی پورٹ کر دیا۔

اس حوالے سے بول چینل کے چیف نیوز آفیسر فیصل عزیز خان کا کہنا تھا کہ عامر لیاقت کو میانمار سے ڈی پورٹ کیا گیا ہے اور وہ بخیریت پاکستان پہنچ گئیے ہیں۔

یاد رہے کہ اس بات کی بھی کوئی تصدیق نہیں ہوسکی کہ عامر لیاقت اور وقار ذکا میانمار پہنچے بھی تھے یا نہیں اور اگر پہنچ گئے تھے تو کیا واقعی انہیں گرفتار بھی کرلیا گیاتھا؟

 

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *