حمزہ علی عباسی کے پاکستان مخالف بیان پر بول چینل کو نوٹس جاری

حمزہ علی عباسی کے پاکستان مخالف بیان پر بول چینل کو نوٹس جاری

 اسلام آباد: پاکستان الیکٹرانک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیمرا ) نے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر ’بول نیوز‘ کو اظہارِ وجوہ نوٹس جاری کرکے  سات روز میں جواب طلب کر لیا ہے۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام کے مطابق  (پیمرا)نے نجی ٹی وی چینل’بول نیوز‘ کو حمزہ علی عباسی کے پروگرام ’ایچ کیو ڈبیٹ‘ میں پاکستانی پاسپورٹ کے متعلق تضحیک آمیز خیالات کے اظہار پر شوکاز نوٹس جاری کرتے ہوئے چینل انتظامیہ سے سات یوم یعنی مورخہ 13ستمبر 2017ء تک جواب طلب کر لیا ہے۔

اس طرح کے خیالات کا اظہار نفرت پر مبنی مواد کے پرچار اور پاکستان مخالف جذبات کو ہوادینے کے زمرے میں آتا ہے ۔

نیز ٹی وی چینل کا یہ اقدام پیمرا قوانین اور ضابطہ اخلاق برائے الیکٹرانک میڈیا 2015ء کی بھی صریحاً خلاف ورزی ہے۔

حمزہ علی عباسی کے پروگرام ایچ کیو ڈیبیٹ میں پی ایم ایل ن کے رہنما جان اچکزئی نے روہنگیا کے مسلمانوں کے حوالے سے متنازع بیان دیا تھا جس پر حمزہ علی عباسی نے پروگرام کے آخر میں اس کا جواب دیا۔

ریگولیٹر نے مذکورہ خلاف ورزی پر چینل انتظامیہ سے جواب طلب کرنے کے علاوہ ’بول نیوز‘ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر کو بھی مقررہ تاریخ کو پیمرا کمیٹی کے روبرو اپنا موقف پیش کرنے کی ہدایت کی ہے۔

پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما جان اچکزئی کا بیان اور حمزہ علی عباسی کا جواب ویڈیو مین ملاحظہ کیا جا سکتا ہے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

One thought on “حمزہ علی عباسی کے پاکستان مخالف بیان پر بول چینل کو نوٹس جاری

  1. حمزہ عباسی نے کوئی غلط بات نہیں کی، اور اس ویڈیو کلپ سے جو کہ اس سائٹ پر دیا گیا ہے اور میں نے لائیو بھی دیکھا تھا، میں کی گئی بات بلکل صحیح ہے، اور میری سمجھ کے مطابق اس سے وہ کسی بھی اخلاقی یا قانونی خلاف ورزی کا مرتکب نہیں ہوا ہے، اس پر نوٹس جاری ہونا شاید ازخود غلط ہے۔ اچکزئی صاحب غلط تھے اور ہیں اس بابت، وہ شاید شاہ سے وفا نبھا رہے ہیں، اور اس میں وہ بنیادی اسلامی اخلاقی اور قومی ذمہ داریوں کے بلکل خلاف چلے گئے ہیں، کم از کم بات کی حد تک تو انکو ان حدود کا خیال رکھنا چاہیئے۔ میں حمزہ عباسی کی اس بویڈیو میں دکھائی گئی بات کی مکمل حمایت کرتا ہوں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *