دہشت گرد پاکستان اور افغانستان کے مشترکہ  دشمن ہیں، آرمی چیف

دہشت گرد پاکستان اور افغانستان کے مشترکہ  دشمن ہیں، آرمی چیف

راولپنڈی: پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہاہے کہ دہشت گرد پاکستان اور افغانستان کے مشترکہ  دشمن ہیں۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ ( آئی ایس پی آر) کے مطابق جمعے کو  افغانستان  سے صحافیوں کے 9 رکنی وفد نے جنرل ہیڈکوارٹر آف پاکستان آرمی (جی ایچ کیو) کا دورہ کیا اور جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات کی۔

آرمی چیف نے افغان صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دہشت گرد افغانستان اورپاکستان کے مشترکہ دشمن ہیں، الزام تراشیوں کے بجائے دونوں ممالک کو باہمی اعتماد اور تعاون کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا کہ دشمن  قوتوں نے جو منفی سازشیں کی اسے میڈیا ختم کرنے میں اہم کردار اداکرسکتا ہے۔پاکستان میں دہشت گردوں کی کوئی پناہ گاہ نہیں، اپنی سرزمین افغانستان کے خلاف استعمال ہونے نہیں دیں گے۔ شدت پسندوں کے خلاف بلاامتیاز کارروائیاں کیں۔

اس موقع پر آرمی چیف نے پاک افغان بارڈر منیجمنٹ کی بہتری پر زور دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے اس حوالے سے بہترین اور مؤثر اقدامات کیے اور باڑی بھی اسی مقصد کے لیے لگائی جارہی ہے، پاک فوج دہشتگردوں کو نقل وحمل روکنے کے لیے  نئے چیک پوسٹیں بھی تعمیر کررہی ہے۔ ان کا کہناتھا کہ دہشت گرد پاکستان اور افغانستان کے مشترکہ دشمن ہیں۔

افغان صحافیوں کے وفد نے ملاقات کے لیے وقت دینے پر جنرل باجوہ کا شکریہ اداکیا اور کہا کہ اس طرح کی ملاقاتوں سے دونوں ممالک کو ایک دوسرے کے مسائل سمجھنے میں مددگارثابت ہوں گی۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *