گلالئی نے الزامات کے لیے 5 کروڑ روپے مقررکیے، تحریک انصاف

گلالئی نے الزامات کے لیے 5 کروڑ روپے مقررکیے، تحریک انصاف

لاہور: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما فواد چوہدری نے دعویٰ کیا ہے کہ عائشہ گلالئی نے ن لیگ کے کہنے پر عمران خان کی ذات کو نشانہ بنایا ہے اور گلالئی نے الزامات کے لیے پانچ کروڑ روپے کی رقم مقرر کی۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام کے مطابق لاہور میں تحریک انصاف کی خواتین رہنماؤں عالیہ ملک اور یاسمین راشد کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ ہمیں اطلاع ہے کہ انہوں نے پی ٹی آئی کے سابق رکن کے کہنے پر عمران خان کی ذات پر حملہ کیا اور پانچ کروڑ روپے کی رقم مقرر کی۔

انہوں نے کہا کہ عائشہ گلالئی مستعفی نہ ہوئیں تو الیکشن کمیشن سے نشست خالی کرانے کی درخواست کریں گے، الزامات پرجہانگیر ترین نے عائشہ گلالئی کو ایک نوٹس بھیجا ہے اور انہیں نشست چھوڑنے کا بھی کہا ہے کیوں کہ وہ پی ٹی آئی کے ٹکٹ پر کامیاب ہوئی تھیںَ۔

فواد چوہدری کا یہ بھی کہنا تھا کہ عائشہ گلالئی نے آرٹیکل 63 کی خلاف ورزی کی اور معافی کے لیے انہیں نوٹس جاری کردیا گیا ہے۔

نیب ایل این جی کرپشن کے معاملے میں شریک جرم ہے، جو ریفرنس بند کیا گیا وہ حدیبیہ پیپرملز کیس سے الگ نہیں تھا، حدیبیہ پیپر ملز کیس دوبارہ کھولا جائے اور جسٹس باقر نجفی کی رپورٹ سمیت جے آئی ٹی کے والیم ٹین کو بھی پبلک کیا جائے۔

انہوں نے الیکشن کمیشن سے سوال کیا کہ اب تک نوازشریف کو ن لیگ کی صدارت سے نااہل کرنے کا  نوٹس کیوں جاری نہیں کیا گیا۔مریم نواز کے اکاؤنٹ میں ایک رات میں 88 کروڑ روپے کہاں سے آئے؟

پریس کانفرنس کرتے ہوئے تحریک انصاف کی مرکزی کمیٹی کی ممبر عالیہ حمزہ کا کہنا تھا کہ عائشہ گلالئی بتائیں کہ الزامات کی کیا قیمت ملی، وہ بتائیں کہ انہیں اگر 2013ء میں غیر اخلاقی میسجز موصول ہوئے تو انہوں نے اس وقت پریس کانفرنس کیوں نہیں کی۔

انہوں نے کہا کہ گلالئی کے الزامات ن لیگ کی سازش ہے، ان کی پریس کانفنرس کے وقت جیونیوز کے تین رپورٹرز وہاں موجود تھے، ہمارے پاس وڈیوز ہیں کہ گلالئی کو جہانگیر ترین پر الزامات لگانے کی ٹپس دی جارہی تھیں، معلوم ہوا ہے کہ گلالئی نے الزامات کے لیے 5 کروڑ روپے طے کیے۔وہ خود بتائیں کہ الزامات کی کیا قیمت ملی ۔

ان کے بقول پریس کانفرنس میں گلالئی سے کچھ سوال پوچھوں گی، انہوں نے عمران خان صاحب پر بد کردار ہونے کا سنگین الزام لگایا لیکن ہم گواہ ہیں کہ عمران خان نے انہیں کبھی آنکھ اٹھاکر بھی نہیں دیکھا۔ خان صاحب کے ساتھ دو روز قبل گلالئی کی ملاقات کے ہرلمحے کی تصاویر موجود ہیں، انہوں نے آنکھ اٹھاکر بھی ان کی طرف نہیں دیکھا۔

عالیہ حمزہ کا کہنا تھا کہ گلالئی نے خود کو غیرت مند پٹھان کہا، اس کے جواب میں کہوں گی کہ غیرت منڈ پٹھان اپنے گھر میں میل ڈرائیور تک نہیں رکھتے، آپ پہلے اپنی بہن کی حرکتیں دیکھیں، کسی پر عزت اچھالنے سے پہلے اپنے گھر کو دیکھنا چاہیئے، گلالئی نے عمران خان پر نہیں تحریک انصاف کی خواتین پر الزامات عائد کیے اور خاتون ہونے کے ناطے میں ان باتوں کا جواب دے رہی ہوں۔

پی ٹی آئی کی خاتون رہنما کا کہنا تھا کہ خان صاحب پر الزام لگایا گیا کہ وہ خواتین کی عزت نہیں کرتے اور اسلام کے خلاف مغربی کلچر کو فروغ دینا چاہتے ہیں، میں کہتی ہوں کہ جتنی عزت خواتین کو یہاں ملی اور کسی پارٹی میں نہیں  دی جاتی، میں ایک انجینئر اور غیر سیاسی شخصیت تھی لیکن عمران خان نے اپنا حق لینا سکھایا، آج پی ٹی آئی کی کور کمیٹی میں شامل ہوں، تحریک انصاف میں خواتین کے پاس بہت سارے عہدے ہیں، پارٹی میں خواتین کی عزت دیکھنی ہے تو شیریں مزاری کو دیکھ لیں۔ پارٹی میں ڈپٹی اسپیکر بھی خاتون ہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اگر عمران خان کے اسلام اور اخلاقیات کی بات کی جائے تو ایک بار ان سے میٹنگ کے بعد اٹھتے وقت میرا بیگ وہاں رہ گیا تھا جس پر خان صاحب نے خود وہ بیگ مجھے اٹھا کر دیا، مجھے احساس ہوا کہ یہ شخص خواتین کی بہت عزت کرتا ہے، کیا یہ مغربی کلچر ہے۔

عالیہ حمزہ کا کہنا تھا کہ پارٹی میں ٹکٹ دینے کا فیصلہ اسمبلی کارکردگی کی بنیاد پر کیا جاتا ہے، گلالئی خود گواہ ہیں کہ ایک بار ان کے سامنے کارکردگی غیر اطمینان بخش ہونے پر عمران خان نے فرمان شاہ کو ڈانٹا تھا۔

انہوں نے کہا کہ گلالئی کچھ غیرت مندوں کے ساتھ عمران خان سے ملاقات کے لیے آئی تھیں اور اس ملاقات کے ہر لمحے کی تصویر موجود ہے۔ عمران خان نے انہیں آنکھ اٹھاکر نہیں دیکھا۔ گلالئی کہتی ہیں کہ نواز شریف خواتین کی عزت کرتے ہیں اور پیلزپارٹی میں ان کی عزت تھی جس پر ان سے پوچھنا چاہوں گی کہ اگر وہاں آپ کی عزت تھی تو پھر مشرف کی پارٹی میں کیوں گئی، اس کے بعد وہاں سے تحریک انصاف میں کیوں شامل ہوئیں، گلالئی خدار الزامات لگاکر اس ملک کی سیاست میں خواتین کا دروازہ بند نہ کریں، خان صاحب نے خواتین کو بااختیار بنایا ہے اور انہیں اپنا حق لینا سکھا یا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ عمران خان پر الزامات ن لیگ کی سازش ہیں، گلالئی کو ان کی پریس کانفرنس میں ڈکٹٰیٹ کیا جارہا تھا جس کے ہمارے پاس ثبوت ہیں، ان کا کہنا تھا کہ میرے بیان کا مقصد گلالئی کو سمجھانا تھا کہ آئندہ اس طرح کی غلیظ حرکت نہ کریں۔

 

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *