فیس بک نے کلک فراڈ ، جعلی خبروں کا خاتمہ کردیا

فیس بک نے کلک فراڈ ، جعلی خبروں کا خاتمہ کردیا

سان فرانسسکو: فیس بک نے کلک فراڈ یا جعلی خبروں کا خاتمہ کرنے کے لئے خاصے عرصے سے اپنے پلیٹ فارم پر تبدیلیوں کا سلسلہ شروع کر رکھا تھا، تاہم سوشل نیٹ ورک نے اب اس اہم مسئلے کا حل دریافت کر لیا ہے۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام ٹیکنالوجی ڈیسک کو فیس بک سے دستیاب ہونے والی اطلاعات کے مطابق سوشل میڈیا پلیٹ فارم کی جانب سے جعلی خبروں کو ختم کرنے کے لئے پبلشرز کے علاوہ دیگر فیس بک پیجز کی یہ سہولت ختم کردی جائے گی جس کے تحت وہ لنک شئیر کرتے وقت کئی چیزوں بشمول ہیڈ لائن، باڈی ٹیکسٹ، تصویر وغیرہ کو ایڈیٹ کر سکتے تھے۔

فیس بک کا لنک اونر شپ فیچر کیا ہے؟

اس معاملے پر فیس بک کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ ہم میڈیا پبلشرز بشمول خبروں، اسپورٹس اور انٹرٹینمنٹ پیجز کے لئے لنک کا ملکیتی فیچر سامنے لا رہے ہیں۔ نئے فیچر کی تفصیل بتاتے ہوئے کہا گیا ہے کہ ہمارے مشاہدے کے مطابق یہ پیجز اپنے لنکس کو تبدیل کرتے ہیں۔

دنیائے سوشل میڈیا کی سب سے بڑی ویب سائٹ فیس بک نے کلک فراڈ اور جعلی خبروں کے خاتمہ کے لئے لنک اونر شپ کا جو نیا فیچر پیش کیا ہے اس کے طریقے کو سمجھنے کے لئے ذیل میں پاکستان ٹرائب کے فیس بک صفحے کی ایک پوسٹ کا اسکرین شاٹ دیکھا جا سکتا ہے۔

فیس بک نے کلک فراڈ ، جعلی خبروں کا خاتمہ کردیا

اس اسکرین شاٹ میں پوسٹ کا کیپشن، ویب سائٹ پر دی گئی ہیڈ لائن، تحریر کے ساتھ موجود تصویر اور ہیڈلائن کے نیچے موجود تفصیل (انٹرو) میں ترمیم و اضافہ یعنی ایڈیٹنگ کی جا سکتی ہے۔

کسی بھی ویب سائٹ کی ہر پوسٹ کو فیس بک پر شئیر کرتے وقت سامنے آنے والے یہ چاروں ایڈیٹ آپشنز جعلی خبریں پھیلانے والوں کو موقع دیتے ہیں کہ وہ ریڈرز کو گمراہ کر سکیں تاکہ انہیں ان کی توقع کے مطابق سائٹ کے بجائے کسی اور ویب سائٹ پر لے جایا جا سکے۔

فیس بک پر جعلسازی یا شارٹ کٹس تلاش کر کے اپنے مقاصد پورے کرنے والی یہ مافیا خود کو مستند ظاہر کرنے یا پھر یوزرز کو غیرمتوقع لنکس پر لے جانے کے لئے ایسے گھناؤنے اقدامات کیا کرتی ہے۔

سب سے بڑے سوشل میڈیا پلیٹ فارم فیس بک فیس بک نے کلک فراڈ یا جعلی خبروں کے خاتمے کے حوالے سے اقدام کے متعلق کہا ہے کہ انہوں نے کچھ حقیقی پبلشرز کے علاوہ باقی تمام فیس بک پیجز کے لئے یہ سہولت ختم کر دی ہے جس کے تحت وہ فیس بک پوسٹ میں ان تینوں چیزوں کو تبدیل کر سکتے تھے۔؎

یہ بھی دیکھیں: فیس بک پر مقبول ترین ایموجیز کے اعدادوشمار جاری

فیس بک کی جانب سے لنکس کے پریویو میں تبدیلی لانے کا اعلان ایف 8 تقریب کے موقع پر کیا گیا تھا تاہم ایسا کوئی لائحہ عمل سامنے نہیں آ پا رہا تھا جو حقیقی پبلشرز کو اس سہولت سے محروم نہ ہونے دے۔

اس تبدیلی کے نتیجے میں فیس بک کو یہ موقع بھی ملے گا کہ وہ جعلی خبروں پھیلانے والوں کے موجودہ طرز عمل میں رکاوٹ بن سکے۔

فیس بک کی جانب سے حقیقی پبلشرز کو لنک اونر شپ کی سہولت دینے کے لئے 12 ستمبر2017 تک درخواست جمع کروانے کا کہا ہے۔ اس کے بعد کمپنی کی جانب سے تمام پیجز کی پرویو کو ایڈیٹ کرنے کی سہولت ختم کر دی جائے گی۔

فیس بک کی جانب سے الگورتھم میں حالیہ تبدیلیاں اور اس طرح کے اقدامات کے ذریعے حقیقی پبلشرز کو مستند اور محفوظ پلیٹ فارم کے طور پر صارفین کا اعتماد حاصل کرنے کا موقع ملے گا۔

جن مستند فیس بک پیجز کے پبلشنگ ٹولز میں لنک اونر شپ کا آپشن اب بھی ظاہر نہیں ہو رہا انہیں فیس بک کی جانب سے اپنے پاٹنر مینجر سے رابطے کی ہدایت کی گئی ہے۔ تاہم ایسا کرنے کا کوئی طریقہ ظاہر نہیں کیا گیا ہے۔

فیس بک کی جانب سے لنک اونر شپ کے فیچر کے متعلق تاحال یہ بات نہیں بتائی گئی کہ جن ممالک باالخصوص پاکستان میں فیس بک پیجز عام طریقے سے ویری فائ نہیں کئے جاتے  کیا وہاں بھی لنک اونر شپ کا فیچر پیجز کے پبلشنگ ٹولز ایریا میں دیا جائے گا یا نہیں؟

شاہد عباسی

پاکستانی صحافی اور ڈیجیٹل میڈیا اسٹریٹیجسٹ شاہد عباسی، پاکستان ٹرائب کے بانی، ایڈیٹر ہیں۔ پاکستان کے اولین ڈیجیٹل میڈیا صارفین میں سے ایک شاہد عباسی بلاگنگ اور خارزار صحافت کے علاوہ اپنے کریڈٹ پر دو ناولز بھی رکھتے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *