ڈیٹا جرنلزم: صحافیوں کو اپنی اسٹوریز ڈیٹا کے ساتھ بیان کرنے کی رہنما ہدایات

ڈیٹا جرنلزم: صحافیوں کو اپنی اسٹوریز ڈیٹا کے ساتھ بیان کرنے کی رہنما ہدایات

اسلام آباد: دنیائے انٹرنیٹ کے بڑے ناموں میں سے ایک گوگل نے 2011 میں ڈیٹا جرنلزم ہینڈ بک Data Journalism Handbook شائع کی تھی جسے ڈیٹا کے ساتھ اسٹوریز شائع کرنے کی رہنما کتاب کہا گیا تھا۔

گوگل نیوز لیب نے یورپین جرنلزم سینٹر European Journalism Centre کے ساتھ مذکورہ ہینڈ بک کا نیا ورژن لانے کے لئے شراکت کا اعلان کیا ہے جس کا مقصد صحافیوں کو اپنی اسٹوریز میں ڈیٹا کے موثر استعمال کے لئے رہنمائی فراہم کرنا ہے۔۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام میڈیا ڈیسک کو گوگل سے موصول اطلاعات کے مطابق مشترکہ طور پر تیار کی جانے والی یہ ہینڈ بک آئندہ برس شائع کی جائے گی۔

یاد رہے کہ فیلڈ میں فعال صحافیوں کے علاوہ ڈیٹا جرنلزم ہینڈ بک طلبہ و طالبات، محققین اور دیگر ایسے افراد کے لئے ایک بہترین تربیتی ذریعہ سمجھا جاتا ہے۔ یہ ان افراد کے لئے خاص طور پر مفید ہے جو تیزی سے فروغ پاچکے ڈیٹا جرنلزم کے شعبے سے متعلق حقائق جاننا چاہتے ہیں۔

گوگل کا کہنا ہے کہ ڈیٹا جرنلزم ہینڈ بک کا نیاورژن آئندہ برس 2018 میں 4 مختلف زبانوں میں مہیا کیا جائے گا۔

صحافت میں ڈیٹا کے استعمال کے متعلق ہینڈ بک کا پہلا ورژن لندن میں ہوئی موز فیسٹ تقریب میں سامنے لایا گیا تھا۔ اس میں ڈیٹا جرنلزم کو استعمال کرنے والے نمایاں افراد اور دیگر کی مشترکہ کاوشیں شامل تھیں۔

یہ بھی دیکھیں: صحافت میں ورچوئل ریالٹی: صحافی اس ٹیکنالوجی سے کیسے اپنا اثر بڑھا سکتے ہیں

گزشتہ تین برسوں کے دوران ڈیٹا جرنلزم ہینڈ بک کا ڈیجیٹل ورژن ڈیڑھ لاکھ سے زائد کی تعداد میں ڈاؤن لوڈ کیا گیا جب کہ 10 لاکھ سے زائد افراد نے اس کے آن لائن ورژن تک رسائی حاصل کی۔

ڈیٹا جرنلزم ہینڈ بک کا نیا ورژن کیوں؟
گوگل نیوز لیب کی جانب سے نیا ورژن لانے کے پس پردہ وجہ بیان کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ اس دوران ہونے والی تبدیلیوں پر نظر رکھتے ہوئے مزید موثر ہدایات کو سامنے لایا جائے گا۔

نئے ورژن کو گوگل نیوز لیب کی ڈیٹا ٹیم کی ایسی کوشش قرار دیا جا رہا ہے جس کا مقصد ڈیٹا جرنلسٹس کو کو اپنے کام میں نئی ٹیکنالوجیز کو بہتر طریقے سے استعمال کرنے کی رہنمائی فراہم کرنا ہے۔

ڈیٹا جرنلزم ہینڈ بک کیلئے آپ کیا کر سکتے ہیں؟
گوگل کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ وہ 31 جولائی کو نئی ہینڈ بک کے لئے تعاون کی درخواست سامنے لائیں گے۔ اس کے بعد ہینڈ بک ہیک نامی عمل کو 50 سے زائد مصنفین جوائن کریں گے جو نئے ایڈیشن کے لئے مواد تخلیق اور اسے ایڈیٹ کریں گے۔

گوگل نیوز لیب کا یہ بھی کہنا تھا کہ نئی ہینڈ بک کے اسباق کے لئے طویل انتظار نہیں کرنا پڑے گا بلکہ جیسے جیسے وہ تیار ہوتے جائیں گے انہیں آن لائن مہیا کردیا جائے گا۔

ڈیٹا جرنلزم ہینڈ بک کے نئے اسباق کو آفیشل ویب سائٹ پر یہاں جاری کیا جائے گا۔

شاہد عباسی

پاکستانی صحافی اور ڈیجیٹل میڈیا اسٹریٹیجسٹ شاہد عباسی، پاکستان ٹرائب کے بانی، ایڈیٹر ہیں۔ پاکستان کے اولین ڈیجیٹل میڈیا صارفین میں سے ایک شاہد عباسی بلاگنگ اور خارزار صحافت کے علاوہ اپنے کریڈٹ پر دو ناولز بھی رکھتے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *