گوگل فوٹو: نئی ایپلیکیشن جو آپ کا مکمل ڈیٹا،تصاویر محفوظ کرے گی

گوگل فوٹو: نئی ایپلیکیشن جو آپ کا مکمل ڈیٹا،تصاویر محفوظ کرے گی

سان فرانسسکو: گوگل فوٹو Google Photo کے نام سے بنائی گئی نئی ایپلیکیشن کو گوگل کی اب تک بنائی جانے والے تمام ایپس میں سے بہتر یوٹیلیٹی ایپلیکیشن تسلیم کیا جا رہا ہے۔ اس کے ذریعے آپ اپنی تصاویر اور ویڈیوز کا بیک اپ بنا سکتے ہیں جن تک گوگل اکاؤنٹ سائن ان کرنے کے بعد کہیں سے بھی رسائی حاصل کی جا سکے گی۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام ٹیکنالوجی ڈیسک کے مطابق گوگل فوٹو میں مختلف چہروں پر مبنی فولڈرز بنانے کے علاوہ تصاویر کی مدد سے مختلف اسٹوریز تخلیق کی جا سکیں گی۔

گوگل کی جانب سے بیک اپ اور سنک کے آغاز کا باقاعدہ اعلان کر دیا گیا ہے جو ونڈوز یا ایپل کے آپریٹنگ سسٹم رکھنے والی ڈیوائسز پر یکساں طریقے سے ہو سکے گا۔ یہ ایپلیکیشن تصاویر اور دیگر فائلز کو گوگل ڈرائیو اور فوٹوز میں محفوظ کیا کرے گی۔

پاکستان ٹرائب کو دستیاب تفصیلات کے مطابق اس ایپلیکیشن کا مقصد صارفین کو ان کی دستاویزات، فائلیں اور تصاویر کو آسانی کے ساتھ محفوظ رکھنے کا موقع فراہم کرنا ہے۔

یہ ایک مشترکہ ایپلیکیشن ہے جو آپ کے پاس پہلے سے ڈیسک ٹاپ پر موجود ڈرائیو اور فوٹوز کی متبادل بنے گی۔ گویا اب ان کاموں کے لئے آپ کو الگ الگ دو ایپلیکیشنز کی ضرورت نہیں رہے گی۔

نئی ایپلیکیشن صارف کو استعمال میں بھی انتہائی آسان محسوس ہو گی۔ ایپلیکیشن کھولنے کے بعد آپ کو سب سے پہلے اپنے گوگل اکاؤنٹ میں سائن ان کرنا ہو گا جس کے بعد آپ سنکرونائز کر کے فولڈرز کا بیک اپ لے سکیں گے جو گوگل ڈرائیو پر محفوظ رہے گا۔

یہ ایپلیکیشن صرف ڈیوائس میں موجود ڈیٹا کو ہی سنک اور محفوظ نہیں کرے گی بلکہ بیرونی ڈیوائسز مثلا کیمرے یا ایس ڈی کارڈز سے بھی ڈیٹا لے کر محفوظ کر سکے گی۔

ایک بار اپنی فائلز اس ایپلیکیشن میں محفوظ کر لینے کے بعد آپ ان تک کہیں سے بھی ویسے ہی پہنچ سکیں گے جیسے آپ اپنے فون یا کمپیوٹر میں موجود ڈیٹا تک پہنچتے ہیں۔

نئی ایپلیکیشن کے ذریعے آپ کی فائلز آپ کی اپنی ڈرائیو میں محفوظ ہوں گی جب کہ تصاویر اور دیگر میڈیا گوگل فوٹوز میں محفوظ ہوا کریں گے۔

گوگل کی اعلان کردہ نئی یوٹیلیٹی ایپلیکیشن کے ذریعے 15 جی بی تک کا ڈیٹا ہی محفوظ کیا جا سکے گا۔ اس سے ذیادہ گنجائش چاہنے کی صورت میں صارف کو ماضی کی طرح اسٹوریج خریدنا ہو گی۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *