منرل واٹر کی بوتل کا استعمال کینسر کا سبب بن سکتا ہے

منرل واٹر کی بوتل کا استعمال کینسر کا سبب بن سکتا ہے

لاہور: پنجاب فوڈ اتھارٹی نے عوام الناس کو متبہ کیا ہے کہ وہ منرل واٹر کی بوتل کو ایک سے زائد مرتبہ استعمال نہ کریں۔ اس سے کینسر جیسی خطرناک بیماریاں پھیلتی ہیں۔

یاد رہے کہ لوگ اپنے گھروں میں منرل واٹر کی بوتلوں کو پانی جمع کرنے کے لیے استعمال کرتے ہیں جو کہ ایک خطرناک عمل ہے۔

پنجاب فوڈ اتھارٹی نے منرل واٹر کی کپمنیوں کو حکم دیا ہے کہ وہ اپنے لیبل کا 10 فیصد اسی آگاہی کے لیے استعمال کرے۔

منرل واٹر کپمنیوں کو اصلاحات کے لیے 2 ماہ کا وقت دیا گیا ہے۔

پنجاب فوڈ اتھارٹی کے مطابق 30 اگست 2017 تک تمام کپمنیاں ان احکامات کے مطابق اصلاح کریں گی۔ عملدرآمد نہ ہونے کی صورت میں کپمنیوں کے خلاف قانونی کاروائی کی جائے گی۔

یہ اعلان پنجاب فوڈ اتھارٹٰی کی طرف سے 2011 ایکٹ، سیکشن 2(b) کے تحت جاری کیا گیا۔

پنجاب فوڈ اتھارٹی نے احکامات جاری کئے ہیں کہ منرل واٹر کی پلاسٹک بوتلوں کو ایک سے زائد مرتبہ استعمال نہ کیا جائے۔

اتھارٹی نے سفارش کی ہے کہ منرل واٹر کی بوتلوں کو استعمال کرنے کے بعد ان میں چھید کرکے ضائع کر دیا جائے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *