پی ایس 114 ضمنی انتخاب نتائج – پی پی نے میدان مار لیا

پی ایس 114 ضمنی انتخاب نتائج – پی پی نے میدان مار لیا

کراچی: کراچی میں سندھ اسمبلی کے حلقے پی ایس 114 پر ہونے والے ضمنی انتخابات کے دوران 92 پولنگ اسٹیشنز کے غیر سرکاری تنائج کے مطابق پیپلزپارٹی امیدوار نے کامیابی حاصل کر لی ہے۔

انتخابی نتائج کے جائزہ کے مطابق یہ صوبائی حلقہ ماضی میں کبھی بھی پیپلزپارٹی جیتنے میں کامیاب نہیں ہو سکی تھی تاہم حالیہ ضمنی انتخاب میں سینیٹر سعید غنی نے کامیابی حاصل کی ہے۔

اتوار کو انتخابی نتائج سامنے آنے کا عمل برتری کے اتار چڑھاؤ کی وجہ سے خاصا دلچسپ رہا۔ 60 سے کم پولنگ اسٹیشنز کے نتائج سامنے آنے تک پی پی پی امیدوار سعید غنی دوسرے نمبر پر تھے تاہم 63 پولنگ اسٹیشنز کے غیر حتمی نتائج سامنے آنے کے بعد انہوں نے مخالف امیدوار پربرتری حاصل کر لی تھی۔ مزید نتائج سامنے آئے تو ایم کیو ایم کے کامران ٹیسوری نے پھر برتری حاصل کر لی۔

انتخابی نتائج 75 پولنگ اسٹیشنز سے آگے بڑھے تو پی پی پی امیدوار نے ایک بار پھر برتری حاصل کر لی اور اختتام تک برقرار رکھا۔ تحریک انصاف امیدوار کے ووٹ عمومی تاثر کے برخلاف کم نکلے جب کہ جماعت اسلامی کی جانب سے اتحاد کے بغیر تنہا ضمنی انتخاب میں اترنے کو پارٹی کی نسبتا جارحانہ حکمت عملی سے تعبیر کیا گیا۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام کے نمائندہ کے مطابق ایم کیو ایم پاکستان کے امیدوار کامران ٹیسوری 18106 جب کہ سعید غنی نے 23797 ووٹ حاصل کئے ہیں۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) کے امیدوار علی اکبر گجر نے 7175 ووٹ حاصل کئے۔

تحریک انصاف کے نجیب ہارون 5942 ووٹوں کے ساتھ چوتھے جب کہ جماعت اسلامی کے امیدوار ظہور جدون 2320 ووٹوں کے ساتھ پانچویں نمبر ہر ہے۔

یاد رہے کہ آج پی ایس 114 پر ہونے والے ضمنی انتخاب  کے دوران امیداواروں کی طرف سے سنگین بے ضابطگیوں کی شکایات کی گئیں۔ تاہم  اکا دکا پرتشدد واقعات کے علاوہ کوئی بڑا ناخوشگوار حادثہ پیش نہیں آیا۔

مزید جانیں: ماروی میمن سے شادی پر اسحاق ڈار بول پڑے

انتخابی عمل کے دوران پیپلزپارٹی امیدوار سعید غنی کی جانب سے رینجرز پر جانبداری کا الزام بھی لگایا گیا تھا جس پر ڈی جی رینجرز سندھ کا کہنا تھا کہ یہ سعید غنی کا ذاتی خیال ہے۔

پی ایس 114 کا مکمل غیر سرکاری نتیجہ اور ٹاپ 5 امیدواروں کے حاصل کردہ ووٹ | pakistantribe.com/urdu/
پی ایس 114 کا مکمل غیر سرکاری نتیجہ اور ٹاپ 5 امیدواروں کے حاصل کردہ ووٹ

تحریک انصاف کے رہنما اسد عمر کا کہنا تھا کہ کراچی کے عوام شام کو خوشخبری سنیں گے جب کہ پی ٹی آئی امیدوار نجیب ہارون نے انتخابی عمل پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ ہم شریف کیا ہوئے سارا شہر بدمعاش بن گیا ہے۔

پی ایس 114 کی نشست ن لیگ کے ٹکٹ پر رکن صوبائی اسمبلی منتخب ہونے والے عرفان اللہ مروت کو نااہل قرار دیے جانے کے باعث خالی ہوئی تھی۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *