روزانہ صرف ایک سنگترہ،ڈیمنشیا کا خطرہ 25 فیصد گھٹائے

روزانہ صرف ایک سنگترہ،ڈیمنشیا کا خطرہ 25 فیصد گھٹائے

ٹوکیو: جاپان کی ٹہوکو یونیورسٹی کے ماہرین کی جانب سے کئی گئی ایک تحقیق کے مطابق روزانہ صرف ایک سنگترہ کھانا خطرناک دماغی بیماری ڈیمنشیا کا خطرہ 25 فیصد تک کم کرتا ہے۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام ہیلتھ ڈیسک کے مطابق ٹہوکو یونیورسٹی جاپان کے ماہرین کا کہنا ہے کہ ٹینگی فروٹ دماغی بیماری ڈیمنشیا کے خلاف ایک موثر ترین ہتھیار ہے۔

ماہرین کے مطابق روزانہ صرف ایک سنگترہ کھانا اس بیماری کا خطرہ 25 فیصد تک کم کرتا ہے۔

ماہرین نے اس حوالے سے 13000 عمر رسیدہ افراد پر ایک تحقیق کی ہے جس سے اس بات کا انکشاف ہوا ہے کہ روزانہ ایک سنگترہ یا کینو کھانے سے ڈیمنشیا کا خطرہ 25 فیصد تک کم ہو جاتا ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ سٹرک ایسڈ رکھنے والے پھل جیسا کہ سنگترہ،کینو،گریپ فروٹ اور لیموں وغیرہ یاداشت کی صلاحیت کو کم کرنے والے عوامل کے خلاف مزاحمت کرتے ہیں جس سے بھولنے والی بیماری کے امکانات کم ہو جاتے ہیں۔

ماہرین کے مطابق صحت کے حوالے غیر موافق حالات کی وجہ سے دماغی امراض میں روز بروز اضافہ ہو رہا ہے اور اگر اس سلسلے میں موثر اقدامات نہ کئے گئے تو اگلے 20 سالوں میں ہر دوسرا شخص دماغی امراض کا شکار ہوگا۔

 

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *