غیرملکی خاتون کو جنسی ہراساں کرنے پر ایف آئی اے افسر گرفتار

غیرملکی خاتون کو جنسی ہراساں کرنے پر ایف آئی اے افسر گرفتار

اسلام آباد: وفاقی دارالحکومت اسلام آباد سے ایک ایسے ایف آئی اے افسر کو گرفتار کیا گیا ہے جو مبینہ طور پر غیرملکی خاتون کو جنسی طور پر ہراساں کرنے میں ملوث تھا۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام کے نمائندہ اسلام آباد کے مطابق گرفتار کیا جانے والے افسر وفاقی تحقیقاتی ادارے یعنی ایف آئی اے میں ڈپٹی ڈائریکٹر کی کی سطح کا ذمہ دار ہے۔

جمعرات کو سامنے آنے والی اطلاع کے مطابق افسر کو اسلام آباد ائیرپورٹ پر پیش آنے والے واقعہ کی بنیاد پر حراست میں لیا گیا ہے۔

پاکستان ٹرائب کے ایڈیٹر شاہد عباسی کے مطابق وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کی جانب سے نوٹس لئے جانے کے بعد افسوسناک واقعہ کی ایف آئی آر درج کر لی گئی ہے جب کہ ایجنسی نے مذکورہ فرد کو معطل بھی کردیا ہے۔

ایف آئی آر کے مطابق شکایت کنندہ کا کہنا ہے کہ وہ اپنی بہن کے ہمراہ افغانستان سے اسلام آباد پہنچی جہاں اسے مذکورہ فرد نے جنسی طور پر ہراساں کیا۔

خاتون کے مطابق انہیں ائیرپورٹ پر ایک کمرے میں پانچ گھنٹے تک روک کر رکھا گیا۔ خاصی دیر بعد کچھ اہلکار آئے اور ان کی بہن کو کاغذات پر مہر لگانے کے لئے ساتھ لے گئے۔ اس مرحلے پر مذکورہ افسر کمرے میں داخل ہوا اور اس سے زیادتی کی کوشش کی۔

شکایت کنندہ کے مطابق وہ الارم بجانے کے بعد کمرے سے بھاگ کر باہر نکلی تو موقع پر موجود اہلکار اس کی حالت دیکھ کر مدد کے بجائے اس پر ہنستے رہے۔

افغان خاتون کے مطابق اسے اور اس کی بہن کو اس بات پر حراست میں لیا گیا کہ دونوں کے پاس رہائش کے لئے مختص ہوٹل کا فون نمبر نہیں تھا۔

پولیس نے واقعہ کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ سی سی ٹی وی فوٹیج کی مدد سے ملزم کو گرفتار کر لیا گیا ہے جسے جمعہ کو مجسٹریٹ کے سامنے پیش کیا جائے گا۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *