شام سے واپس عسکریت پسند،کراچی پولیس قتل میں ملوث

شام سے واپس  عسکریت پسند،کراچی پولیس قتل میں ملوث

کراچی: کاونٹر ٹیررزم ڈیپارٹمنٹ(سی ٹی ڈی)نے کراچی پولیس کے قتل میں ملوث ایک نئے گروپ انصار ال شریعہ پاکستان(اے ایس پی)کا انکشاف کیا ہے۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق اس نئے گروپ نے دھورا جی کالوجی اور سائٹ ایریا میں پولیس پر حملوں کی زمہ داری قبول کی ہے،اس کے علاوہ اپریل میں فوجی آفیسرطاہر ناگی کو ہلاک کرنے کا دعوی بھی کیا ہے۔

سی ٹی ڈی ذرائع کے مطابق یہ وہ جنجگو ہیں جو حال ہی میں شام میں جاری جنگ میں حصہ لے کر واپس آئے ہیں جبکہ ان کی تعداد کے بارے میں حتمی طور پر کچھ نہیں کہا جا سکتا۔

سی ٹی ڈی ایس ایس پی عمر شاہد حامد کا کہنا ہے کہ یہ افراد مڈل ایسٹ میں دہشت گرد گروپوں سے تعلق رکھتے ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ فی الحال پاکستان میں ان کے سرغنہ کا پتا نہیں چل سکا،ان کی کاروائیاں ابھی تک کراچی میں فورسز کو نشانہ بنانے تک محدود ہیں۔

رپورٹ کے مطابق انصار ال شریعہ کی تشکیل 2012 میں لیبیا میں ہوئی،بعد ازاں اس گروپ نے القاعدہ اور الاحرار ال شام کے ساتھ مل کر شامی حکومت کے خلاف داعش کی مدد کی،یہ گروپ اقاعدہ کا حامی ہے مگر دہشت گرد کاروائیاں اپنے طور سے کرتا ہے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *