کان میں بال امراض قلب کی نشانی

کان میں بال امراض قلب کی نشانی

بوسٹن: ایک نئی تحقیق میں  کان کی کینال پر بالوں کی موجودگی اور دل کیے دورے میں ایک تعلق پایا گیا ہے۔

پاکستان ٹرائب ہیلتھ ڈیسک کے مطابق بوسٹن یونیورسٹی کے ماہرین گذشتہ تین دہائیوں سے  ان دونوں چیزوں کے بارے میں تعلق پر تحقیق کررہے تھے اور ہر بار اس کی توثیق ہوتی رہی۔

ڈاکٹر سینڈرس ڈی فرانک  کاکہنا ہے کہ کان میں بال اس وقت پرورش پاتے ہیں جب ہم ہارمون ایسٹروجن کے رحم وکرم پر رہیں،اس کے علاوہ ٹیسٹیرئیون کی وجہ سے بھی دل کے دورے کے امکانات پیدا ہونے لگتے ہیں،اس کی وجہ سے سرخ خلیے بہت زیادہ بنتے ہیں اور شریانوں میں خون کا لوتھڑا بننے لگتاہے۔

رپورٹ کے مطابق  امریکن جرنل آف فورینزک میڈیکل پتھالوجی کے ماہرین نے جسم کے  مختلف حصوں اور ان کے دل کے اثرات کا مطالعہ کیا اور یہ بات دیکھی کہ کان کے بالوں اور دل کی بیماریوں کا گہرا تعلق ہے اور اس کی وجہ سے مردوں میں اموات کی شرح زیادہ ہوسکتی ہے۔

اس حوالے سے ماہرین نے  43مردوں اور20خواتین پر ایک تحقیق کی جو امراض قلب میں مبتلا تھے،ان میں سے 90فیصد شرکا کے کان کی کینال میں وافر با ل تھے۔

 

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *