پہلی بار ماں بننے والی خواتین کو شرمندگی کا سامنا

پہلی بار ماں بننے والی خواتین کو شرمندگی کا سامنا

مشی گن: ہر عورت کی شادی کے بعد سب سے بڑی خواہش ماں بننے کی ہوتی ہے مگر یہ بھی ایک حقیقت ہے کہ پہلی بار ماں بننے والی خواتین کو بچے کی پرورش کے حوالے سے اپنے گھر والوں اور سسرال والوں کی تنقید کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

پاکستان ٹرائب لائف اسٹائل ڈیسک کے مطابق  یونیورسٹی آف مشی کی ایک حالیہ تحقیق میں اس بات کا انکشاف کیا گیا ہے کہ پہلی بار ماں بننے والی خواتین کو اپنے والدین اور سسرال والوں کی تنقید کا نشانہ بننا پڑتا ہے۔

ماہرین نے اس حوالے سے پہلی بار ماں بننے والی 475 خواتین پر ایک تحقیق کی جس میں ان سے اس حوالے سے سوالات کئے گئے۔

ریسرچ میں شامل 70 فیصد خواتین کا کہنا تھا کہ انہیں اپنے والدین اور سسرال والوں کی جانب سے بچے کی پرورش کے حوالے سے شدید تنقید کا نشانہ بنایا گیا اور انہیں سخت شرمندگی کا سامنا کرنا پڑا۔

ان خواتین کا کہنا تھا کہ بچے کی پرورش کے حوالے سے ہر شخص نے اپنا ہی مشورہ دیا جس کی وجہ سے وہ سخت کنفیوز ہو گئیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ پہلی بار ماں بننے والی خواتین کو کئی مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے کیونکہ انہیں بچے کی پرورش کے حوالے سے زیادہ معلومات نہیں ہوتی جبکہ ان کے اپنے گھر والے اور سسرالی رشتے دار بھی رہنمائی سے زیادہ تنقید کرتے ہیں۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *