دوست کو کمسن بیٹیوں کا جسم بیچنے والے والدین منظرعام پر

دوست کو کمسن بیٹیوں کا جسم بیچنے والے والدین منظرعام پر

لندن: اپنی کم سن بیٹیوں کو جنسی عمل کے لئے اپنے ہی دوست کے ہاتھوں فروخت کرنے کے جرم میں سزا پانے کے بعد فرار ہو جانے والے والدین منظرعام پر آگئے ہیں۔

چون سالہ باپ اور 59 سالہ ماں کو اپنی کم سن بیٹیوں کی دلالی کے جرم میں 2016 میں سزا سنائی گئی تھی۔

برطانوی میڈیا رپورٹس کے مطابق طویل عرصے سے غائب رہنے والے جوڑے کو اسپین کی سول گارڈ نے ملاگا کے علاقے کاراٹاما میں تلاش کر ہی لیا۔

اسپینی حکام نے جوڑے کی شناخت ظاہر کئے بغیر تصدیق کی ہے کہ یورپئن اریسٹ وارنٹ کے تحت حراست میں لیا گیا جوڑا برطانوی شہریت رکھتا ہے۔

اسپینش سول گارڈ پولیس کے ترجمان کا کہنا تھا کہ جوڑے نے 2009 میں اپنی کم عمر بیٹیوں کو اپنے ہی ایک دوست کو جنسی عمل کے لئے فروحت کرنے کی دلالی کی تھی۔ اس کے بدلے ماں باپ نے مالی منفعت حاصل کی تھی،اسی جرم میں انہیں 2016 میں سزا سنائی گئی تھی۔

سزا سنائے جانے کے بعد مالورکا جزیرے کے رہائشی جوڑے نے راہ فرار اختیار کی۔ اس دوران جوڑا مالاگا میں ایک شیڈ میں ریائش پزیررہا۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *