لوڈشیڈنگ کے خلاف دھرنا،پی ٹی آئی میں پھوٹ پڑ گئی

لوڈشیڈنگ کے خلاف دھرنا،پی ٹی آئی میں پھوٹ پڑ گئی

پشاور:پشاور میں لوڈ شیڈنگ کے خلاف تحریک انصاف کے دھرنے نے مقامی قیادت کو2دھڑوں میں تقسیم کر دیا جبکہ عائشہ گلا لئی نے پیپکو ملازمین کو چھٹی کے بعد گھروں کو نہ جانے دینے کا اعلان کر دیا ہے۔

پاکستان ٹرائب کو دستیاب اطلاعات کے مطابق پشاور میں لوڈ شیڈنگ اور اوور بلنگ کے خلاف دھرنے کے بعد مذاکرات کے معاملے پر پی ٹی آئی کی مقامی قیادت دو دھڑوں میں تقیسم ہو گئی۔

ضلع ناظم پشاور پیپکو حکام کے ساتھ مذاکرات کے بعد لوڈ شیڈنگ کے دورانیہ میں کمی کے وعدے کے ساتھ کارکنوں سمیت واپس چلے گئے جبکہ دھرنے کی کال دینے والی رکن قومی اسمبلی عائشہ گلا لئی نے دھرنا جاری رکھنے کا اعلان کردیا۔

 عینی شاہدین کے مطابق دھرنے کے بعد پارٹی کارکنوں نے واپڈ اہاﺅس پر دھاوا بولا اور دیواریں پھلانگ کر اندر داخل ہوئے جس کے بعد حکام نے انہیں مذاکرات کے لئے بلالیا،ضلع ناظم پشاور نے پیپکو حکام کے ساتھ مذاکرات میں لوڈشیڈنگ میں4گھنٹے کمی کا مطالبہ منوا کر احتجاج ختم کرنے کا اعلان کردیا۔

مگر عائشہ گلا لئی نے کہا کہ کارکنوں کو احتجاج کے لئے کال میں نے دی تھی مگر مجھے مذاکرات کے لئے نہیں بلایا گیا،چار گھنٹے لوڈ شیڈنگ کم کرنا مذاق کے مترادف ہے ہم اپنا احتجاج جاری رکھیں گے۔

عائشہ گلا لئی نے دھمکی دی کہ پیپکو ملازمین کو2بجے چھٹی ہوتی ہے انہیں گھروں کو جانے نہیں دیا جائے گا۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *