عمران خان نااہلی کیس میں کپتان مستقبل کے وزیر اعظم قرار دے دیے گئے

عمران خان نااہلی کیس میں کپتان مستقبل کے وزیر اعظم قرار دے دیے گئے

اسلام آباد:سپریم کورٹ میں پی ٹی آئی چئیرمین عمران خان کی نااہلی کیس کی سماعت کرتے ہوئے چیف جسٹس آف پاکستان کا کہنا تھا کہ کیاآپ چاہتے ہیں کہ اقلیت کے فیصلےکی بنیاد پرعمران خان کوبھی نااہل قراردےدیں؟

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام کے مطابق لیگی رہنما حنیف عباسی کی جانب سے  پاکستان تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان کی نااہلی کیس کی سماعت کرتے ہوئے چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے ریمارکس دیے کہ کیا وزیراعظم کے خلاف مقدمہ ایک عام رکن اسمبلی کیخلاف مقدمےکےبرابرہو سکتاہے؟

کیس کی سماعت کے دوران دلائل دیتے ہوئے حنیف عباسی کے وکیل اکرم شیخ کا کہنا تھا کہ فیصلہ وہی ہوتا ہے جو اکثریت کا ہو، میرا مقدمہ پاناما کیس سے الگ ہے۔

اکرم شیخ کا کہنا تھا کہ پاناما کیس موجودہ وزیر اعظم کا کیس تھا جب کہ میں آنے والے وزیر اعظم کے خلاف کیس لے کر آیا ہوں۔

کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس دیتے ہوئے چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ عام رکن اسمبلی کے خلاف نااہلی کی درخواستوں کی اجازت دے کرہم نیا دروازہ تونہیں کھول رہے؟

اکرم شیخ کے دلائل پر ریمارکس دیتے ہوئے چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ کیا آپ کا موقف یہ ہے کہ پاناما فیصلے میں اقلیت کا فیصلہ درست ہے؟ انہوں نے کہا کہ پاناماکیس میں اکثریت نے جے آئی ٹی بنانے کا فیصلہ کیا۔

یاد رہے مسلم لیگ (ن) کے رہنما حنیف عباسی کی جانب سے عمران خان اور جہانگیر ترین کے خلاف دائر درخواست کی سماعت سپریم کورٹ کے چیف جسٹس ثاقب نثارکی سربراہی میں تین رکنی بنچ کر رہا ہے۔

 

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *