عوام کا پی ٹی آئی کے صوبائی وزیر قلندرلودھی پر پتھروں سے حملہ

عوام کا پی ٹی آئی کے صوبائی وزیر قلندرلودھی پر پتھروں سے حملہ

ایبٹ آباد: پاکستان کے شمال مغربی صوبے خیبرپختونخوا میں تحریک انصاف کے صوبائی وزیر خوارک قلندر خان لودھی پر عوام نے پتھروں سے حملہ کر دیا جس سے وہ زخمی ہو گئے ہیں۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام کے نمائندہ کے مطابق الیکشن جیتنے کے بعد پاکستان تحریک انصاف میں شامل ہونے اور بعد میں صوبائی وزیر بننے والے قلندر خان لودھی اپنے حلقہ انتخاب کے علاقے پنڈ کرگو خان (پی کے خان) میں پتھراؤ کا نشانہ بنے۔

قلندر خان لودھی ساڑھے تین سال بعد اپنے حلقے میں گئے تو عوام مشتعل ہو گئے اور کہا کہ”ساڑھے تین سال بعد کیا کرنے آئے ہو”یہ کہتے ہوئے عوام نے اپنے وزیر پر پتھروں سے حملہ کر دیا جس سے وہ زخمی بھی ہو گئے۔

خیبرپختونخوا کے صوبائی حلقے پی ایف چھیالیس میں ہوئے احتجاج کے موقع پر عوام نے گو قلندر خان گو اور  گو عمران گو کے نعرے بھی لگائے۔

خیبرپختونخوا کا ہزارہ ڈویژن روایتی طور پر لیگی سیاست کا علاقہ سمجھا جاتا تھا تاہم حالیہ انتخابات میں ڈویژنل ہیڈکوارٹر ایبٹ آباد سے آزاد حیثیت سے  جیتنے والے تین اراکین صوبائی اسمبلی نے تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کی,جن میں قلندرلودھی بھی شامل ہیں. دیگر دو اراکین میں سے ایک مشتاق غنی اطلاعات کے صوبائی محکمے کو دیکھتے ہیں جب کہ ماضی میں جے یو آئی کا حصہ رہنے والے سردار ادریس کے پاس کوئی اضافی ذمہ داری نہیں ہے۔

ماضی میں مختلف سیاسی وابستگیاں رکھنے کے دوران سابق آمر پرویز مشرف کی نگرانی میں بننے والی پاکستان مسلم لیگ کے خیبرپختونخوا اسمبلی میں پارلیمانی لیڈر رہنے کے بعد پی ٹی آئی کا حصہ بننے والے قلندر خان لودھی پرویز خٹک کی کابینہ کا حصہ ہیں۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *