“شریف فیملی کو اپنے وکلاء پر بھروسہ نہیں رہا”اہم انکشاف

“شریف فیملی کو اپنے وکلاء پر بھروسہ نہیں رہا”اہم انکشاف

اسلام آباد:سینئر صحافی اور کالم نویس روؤف کلاسرا کا کہنا ہے کہ شریف فیملی کو اپنے وکیلوں پر بھروسہ نہیں ہے کیوں کہ اگر بھروسہ ہوتا تو وہ اپنی اربوں کی جائیداد کی تمام تر تفصیلات وکلاء کے سامنے رکھتے۔

پاکستان ٹرائب کو دستیاب تفصیلات کے مطابق معروف صحافی روؤف کلاسرا نے انکشاف کیا ہے کہ پانامہ کیس کے فیصلے کے بعد شریف فیملی نے اپنے وکلاء کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا تھا کہ انھوں نے قطری خط صحیح انداز میں عدالت میں پیش نہیں کیا۔

جس پر وکیل اکرم شیخ کا ردعمل آیا کہہ مجھے جو ہدایات ملی تھیں میں نے اسی طرح بند لفافے میں قطری خط عدالت کے روبرو کر دیا اس سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ شریف فیملی کو اپنے وکیلوں پر اعتماد نہیں ہے اورانہوں نے اپنی اربوں کی جائیدادوں کی تفصیلات وکلاء کو نہیں بتائی اور اس عدم اعتمادی کی سب سے بڑی وجہ نواز شریف کے پرانے وکیل اعتزاز احسن کا ساتھ چھوڑنا تھا۔

روؤف کلاسرا نے کہا کہ جب سینٹ میں سعد رفیق نے اعتزاز احسن کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ وہ تو چوروں،ڈاکوؤں،قبضہ مافیہ گروپس اور ایل این جی کنگ جیسے کرپٹ لوگوں کی وکالت کرتے ہیں،تواعتزاز احسن کہہ بیٹھے کہ وہ ماضی میں شریف فیملی کے بھی وکیل تھے۔

یاد رہے کہ یہ اعتزاز احسن ہی تھے جنہوں نے وزیراعظم کے ٹیکس کی حقیقت منظر عام پر لےکر آئے کہ وزیراعظم غیر معمولی امیر ہونے کے باوجود پانچ ہزار روپے سالانہ ٹیکس ادا کرتے ہیں۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *