بول نیوز کے لائسنس معطل کردیے گئے

بول نیوز کے لائسنس معطل کردیے گئے

 اسلام آباد: پاکستانی نجی چینلز میں سے ایک بول نیوز کو اب تک کی سب سے بڑی پریشانی کا سامنا اس وقت کرنا پڑا جب پیمرا نے چینل کے لائسنس معطل کر دئے۔بول نیٹ ورک کی انتظامیہ کی طرف سے فوری طور پر اس فیصلے پر کوئی ردعمل سامنے نہیں آیا لیکن یہ چینل اس فیصلے کے خلاف عدالت سے رجوع کر سکتا ہے۔

 پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام کو دستیاب اطلاعات کے مطابق پاکستان میں الیکٹرانک میڈیا کےنگران ادارے “پیمرا” نے نجی ٹی وی نیٹ ورک “بول” کے لائسنسز منسوخ کر دیے ہیں۔

بدھ کو پیمرا کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا کہ وزارت داخلہ کی طرف سے اس نیٹ ورک کے ڈائریکٹر شعیب شیخ،عائشہ شعیب شیخ،وقاص عتیق اور ثروت بشیر کی سکیورٹی کلیئرنس مسترد کیے جانے کے بعد یہ اقدام کیا گیا۔

 یاد رہے کہ بول نیوز نامی نیٹ ورک “لبیک پرائیوٹ لمیٹڈ” نامی کمپنی کی ملکیت ہے اور مذکورہ بالا افراد اس کمپنی کے ڈائریکٹرز ہیں۔

 پیمرا کی جاری کردہ تفصیلات کے مطابق بول نیوز اور بول انٹرٹینمنٹ کے لائسنسز فوری طور پر منسوخ کر دیے گئے ہیں۔

 مزید برآں تقسیم کاروں اور کیبل آپریٹرز کو اس فیصلے پر عملدرآمد کی ہدایت جاری کر دی گئی ہے،شعیب شیخ “ایگزیکٹ” نامی کمپنی کے بھی چیف ایگزیکٹو ہیں جس کے بارے میں دو سال قبل ایک تہلکہ خیز خبر سامنے آئی تھی کہ اس کمپنی نے دنیا بھر میں مبینہ طور پر لوگوں کو جعلی تعلیمی اسناد فراہم کر کے اربوں ڈالر کمائے۔

 شعیب شیخ اور کمپنی کے دیگر ڈائریکٹرز کو مئی 2015ء میں گرفتار کر لیا گیا تھا۔ طویل عرصہ قید میں رہنے کے بعد گزشتہ سال اگست میں شعیب شیخ کو سندھ ہائی کورٹ نے ضمانت پر رہائی دی تھی۔

بول نیوز نیٹ ورک اپنے لائسنس کی معطلی کے ساتھ ساتھ سابقہ ملازمین کی تنخواہوں کی مد میں واجب الادا رقم کے حوالے سے بھی شدید تنازعے کا شکار ہے۔

 

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *