“شیر کا مقابلہ سو گیدڑ بھی نہیں کر سکتے”

“شیر کا مقابلہ سو گیدڑ بھی نہیں کر سکتے”

لیہ:وزیراعظم نواز شریف نے کہاہے کہ عوام کی محبت ہمیں2018انتخابات میں جیت کا پیغام دے رہی ہے”شیر شیر”ہی ہوتا ہے اور سو گیدڑ مل کر بھی اس کا مقابلہ نہیں کرسکتے سیاسی مخالفین نہیں چاہتے کہ ملک میں سی پیک بنے ان کو صرف دوسروں پر کیچڑا چھالنا آتا ہے۔

پاکستان ٹرائب کو دستیاب تفصیلات کے مطابق وزیراعظم پاکستان اپنی پری الیکشن انتخابی مہم کے سلسلے میں منگل کی سہ پہر لیہ میں موجود تھے جہاں انھوں نے لیہ کے عوام کے لئے ان گنت منصوبوں کا اعلان کیا۔

لیہ میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نواز شریف کا کہنا تھا کہ ہمارے مخالفین اور پاکستان کے دشمن چاہتے ہیں کہ سی پیک نہ بنے،ملک میں سڑکیں،موٹروے نہ بنے،یہی نہیں مخالفین کی کوشش ہے کہ ملک سے لوڈ شیڈنگ کا خاتمہ نہ ہو،انہیں صرف شور مچانا اور الزام تراشی کرنی آتی ہے ہمارے دشمن گزشتہ چار سال سے ایک ہی الزام لگا رہے ہیں اور گالیاں نکال رہے ہیں لیکن ہم نے کبھی انہیں گالی کا جواب گالی سے نہیں دیا جبکہ سیاسی مخالفین ہر روز نئے الزامات لگاتے ہیں اور کیچڑ اچھالتے ہیں لیکن ان کو یہ نہیں معلوم کہ شیر شیر ہوتا ہے اور سو گیدڑ بھی اس کا مقابلہ نہیں کرسکتے۔

انہوں نے کہا کہ میرادل ابھی بھی بھرا نہیں ہے،میں چاہتا ہوں الیکشن سے قبل ایک بار پھر یہاں واپس آؤں اور جس طرح عوام نے مجھ سے محبت اظہار کیا ہے میں ان کا ماتھا چوموں کیونکہ آپ عوام ہی میرا سرمایہ ہیں میرا دل کرتا ہے میں صبح سے رات تک اور رات سے لے کر صبح تک عوام کی خدمت کروں۔

وزیراعظم نے اہلیان لیہ کے لئے منصوبوں کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ میں لیہ کے عوام کے لئے ہیلتھ کارڈ کی سہولت لے کر آیا ہوں کیونکہ اگر کوئی غریب بیمار ہوجائے تو اس کے پاس علاج کیلئے پیسے نہیں ہوتے،ان کی جائیدادیں بک جاتی ہیں،لوگوں سے ادھار پیسے لیتے ہیں لیکن اب ایسا نہیں ہوگا ،میری ٹیم آئے گی اور یہاں کا سروے کرنے کے بعد غریبوں کو ہیلتھ کارڈ فراہم کرے گی۔

 مخالفین پر تنقید کرتے ہوئے وزیراعظم نواز شریف نے کہا کہ عمران خان نیا پاکستان بنانے کی بات کرتے تھے لیکن جس ایک صوبے کی حکومت ملی ہوئی ہے تم نے تو اس کا بھی پرانے پاکستان والا حال کر دیا ہے۔ نیا پاکستان تو ہم بنا رہے ہیں ،عوام کیلئے سڑکیں ،موٹروے اور اسپتال بنا رہے ہیں، یہی نہیں ہم کسانوں ، مزدوروں،صنعت کاروں اور عوام کی خدمت میں مصروف ہیں کیونکہ ہم اس خدمت کو عبادت سمجھتے ہیں۔

انہوں نے کہاکہ مخالفین کی جلسی میں لوگ کم اور کرسیاں زیادہ ہوتی ہیں،ان کی دس جلسیاں بھی ہمارے ایک جلسے کا مقابلہ نہیں کرسکتی کیو نکہ یہ شیروں کا جلسہ ہے۔ آج پاکستان بھر میں لیہ لیہ ہورہی ہے اور 2018کی نویدسنا رہی ہے۔

تعمیراتی پروجیکٹس کا اعلان کرتے ہوئے وزیراعظم کا کہنا تھا کہ لیہ سے تونسہ سے تک پل بنا یا جارہا ہے،180میل کا فاصلہ244کلومیٹر میں طے کیا جائے گا اور اس پل کی تعمیر پر700کروڑ روپے کی لاگت آئے گی،یہ700کروڑ لیہ کے عوام پر قربان ہے جبکہ میں نے انتظامیہ کو بھی کہاہے کہ پل کا کام فوری طور پر شروع اور جلد از جلد ختم ہونا چاہیے۔اسے کہتے ہیں عوام کی خدمت اور ہم یہ خدمت دل سے کررہے ہیں ، اگر کسی کو ہماری بات پر شک ہے تو وہ لیہ آکراپنی آنکھوں سے عوام کی خدمت کو دیکھ لے۔

انہوں نے کہاکہ ہم ملک سے لوڈ شیڈنگ کی لعنت کوختم کردیں گے اور ہمارے بنائے ہوئے نئے کارخانوں نے بجلی بنانا شروع کرد ی ہے ،اب ایک بار بجلی آگئی تو دوبارہ کبھی نہیں جائے گی،ہم کسانوں کیلئے ٹیوب ویل کی بجلی بھی سستی کررہے ہیں۔میرا2013والا جذبہ ابھی بھی زندہ و سلامت ہے اور ملک و عوام کی خد مت کیلئے حاضر ہوں۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *