سنسکرین کا زیادہ استعمال،وٹامن ڈی کی کمی کا سبب

سنسکرین کا زیادہ استعمال،وٹامن ڈی کی کمی کا سبب

کیلیفورنیا: ایک نئی تحقیق کے مطابق سنسکرین کا باقائدہ یا زیادہ استعمال وٹامن ڈی کی کمی پیدا کرتا ہے کیونکہ یہ سورج کی روشنی سے ملنے والی توانائی کو جسم میں جذب ہونے سے روکتا ہے۔

یونیورسٹی آف ٹہورو کیلیفورنیا کی رپورٹ کے مطابق تقریبا ایک بلین لوگ سنسکرین کے زیادہ استعمال کی وجہ سے وٹامن ڈی کی کمی کا شکار ہیں۔

حالیہ تحقیق کے مطابق سنسکرین کے زیادہ استعمال سے سورج سے حاصل ہونے والی توانائی جسم میں جذب نہیں ہوتی جس سے وٹامن ڈی کی کمی ہو جاتی ہے اور یہ پٹھوں کی کمزوری اور ہڈیوں کے فریکچر کا باعث بنتی ہے۔

ماہرین کے مطابق گرمیوں میں لوگ عموما گھروں سے باہر نہیں نکلتے اور جب نکلتے ہیں تو سنسکرین کا استعمال کر کے ہی سورج کے سامنے آتے ہیں جس کی وجہ سے سورج کی روشنی سے حاصل ہونے والے فائدے سے دور رہتے ہیں۔

سورج کی روشنی میں جسم خود ے توانائی تیار کرتا ہے اور اگر سورج کی روشنی سے بالکل ہی دور رہا جائے یا پھر بہت زیادہ سنسکرین کا استعمال کیا جائے تو وٹامن ڈی کی کمی پیدا ہوتی ہے جو کئی جسمانی مسائل کا سبب بنتی ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ گرمی کے موسم میں سورج کی تپش سے بچنا چایئے مگر صبح یا شام کے وقت کچھ وقت کے لئے سورج کی روشنی میں رہنا بہتر ہے اور اس سے بالکل ہی دور ہو جانا کئی قسم کے مسائل پیدا کرتا ہے جن میں سے ایک وٹامن ڈی کی کمی بھی ہے۔

 

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *