بغیر نہائے سوئمنگ پول میں اترنا،صحت کیلئے مضر

بغیر نہائے سوئمنگ پول میں اترنا،صحت کیلئے مضر

لندن: سوئمنگ پول میں اترنے سے پہلے نہ نہانا صحت کے سنگین مسائل پیدا کر سکتا ہے،یہ بات ایک نئی تحقیق سے سامنے آئی ہے۔

رپورٹ کے مطابق سوئمنگ پول میں تیراکی کے لئے اترنے سے پہلے نہ نہانا صحت کے لئے نقصان دہ ثابت ہو سکتا ہے اور اس کی وجہ سوئمنگ پولز میں استعمال کیا جانے والا کلیورائیڈ ہوتا ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ بہت کم ایسے لوگ ہوں گے جو سوئمنگ پول میں اترنے سے پہلے شاور لیتے ہوں کیونکہ سوئمنگ پول میں تیرنے کو نہانا ہی سمجھا جاتا ہے اس لئے لوگوں کو لئے یہ بات یقینا حیرت کا باعث ہو گی کہ انہیں یہ مشورہ دیا جائے کہ سوئمنگ پول میں تیراکی سے پہلے نہا لیں۔

رائل برومپٹن ہاسپٹل کی ایک نئی تحقیق کے مطابق سوئمنگ پول میں استعمال کئے جانے والے کلیورائیڈ کی وجہ سے سوئمنگ پول میں سطح آب پر ایک گیس کی تہہ بن جاتی ہے جو بغیر نہائے ہوئے اترنے والے افراد کو سانس کی بیماری میں مبتلا کر سکتا ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ سوئمنگ پول میں اترنے سے پہلے نہانا اس لئے بھی ضروری ہے کہ گرمی کے موسم میں جسم پر پسینہ آتا جو سارا پول کے پانی میں شامل ہو جاتا ہے جس سے خود کو اور دوسروں کو بھی جلد کی بیماریاں لاحق ہق سکتیں ہیں۔

 

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *