علیم خان کی دھمکیاں،صحافیوں کاعمران خان کی رہائشگاہ کےباہراحتجاج کااعلان

علیم خان کی دھمکیاں،صحافیوں کاعمران خان کی رہائشگاہ کےباہراحتجاج کااعلان

اسلام آباد: تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کی پریس کانفرنس کے دوران پی ٹی آئی رہنما علیم خان کی صحافیوں سے بدتمیزی،انہیں رشوت کی پیشکش کرنے اور دھکم پیل کے خلاف احتجاج کا سلسلہ جاری ہے۔

اسلام آباد سے پاکستان ٹرائب کے نمائندہ کا کہنا ہے کہ الیکٹرانک و پرنٹ میڈیا سے تعلق رکھنے والے رپورٹرز نے ہفتہ کے روز تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کی رہائش گاہ کے باہر احتجاج کرنے کا اعلان کیا ہے۔

عمران خان کی رہائش گاہ بنی گالہ کے باہر مظاہرے کا اہتمام تحریک انصاف بیٹ رپورٹرز ایسوسی ایشن،نیشنل پریس کلب اسلام آباد اور راولپنڈی اسلام آباد یونین آف جرنلسٹس کی جانب سے کیا گیا ہے۔

وفاقی دارالحکومت سے تعلق رکھنے والے صحافی شہباز احمد قریشی کے مطابق احتجاجی مظاہرہ ہفتہ یکم اپریل کو سہ پہر ساڑھے تین بجے کیا جائے گا۔

نجی ٹی وی چینل کے اینکر کاشف عباسی کے مطابق پی ٹی آئی نے اپنی قیادت کو ٹی وی چینلز پر پروگرامات میں شرکت کرنے سے بھی روکا ہے۔

احتجاجی صحافیوں کا کہنا ہے کہ علیم خان نے پی ٹی آئی سربراہ کی موجودگی میں انتہائی نازیبا رویے کا مظاہر کیا تھا،جس پر آن کیمرہ معافی مانگنے کا مطالبہ کرتے ہوئے چوبیس گھنٹے کی مہلت دی گئی تھی،تاہم ابھی تک معاملے کو سلجھانے کے لئے پی ٹی آئی قیادت نے کچھ نہیں کیا۔

یاد رہے کہ عمران خان کی پریس کانفرنس کے دوران ان سے قبضہ مافیا اور اس میں پی ٹی آئی قیادت کے ملوث ہونے کے متعلق سوال کیا گیا تھا۔ جس پر طیش میں آئے ہوئے علیم خان نے پہلے تو صحافی سے کہا کہ وہ سوال نہ پوچھیں 5 یا 8 مرلے کا پلاٹ انہیں بھی مل جائے گا۔ تاہم بعد میں وہ مذکورہ صحافی کے پاس گئے اور انہیں دھمکانے کے ساتھ دھکم پیل بھی کی۔

اسلام آباد سے تعلق رکھنے والے صحافیوں نے واقعہ کے بعد تھانہ بنی گالہ میں علیم خان کے خلاف درخواست بھی جمع کروائی تھی۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *