پاراچنار دھماکے کے خلاف مظاہرین کا احتجاج

پاراچنار دھماکے کے خلاف مظاہرین کا احتجاج

کرم ایجنسی:کرم ایجنسی کے دارالحکومت پارا چنار میں جمعے کی صبح ہونے والے دھماکے کے خلاف مظاہرین نے شدید احتجاج کیا۔

پاکستان ٹرائب ڈاٹ کام کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق دھماکے کے خلاف احتجاج کرنے والے مظاہرین نے شہید چوک پر دھرنا دیا اور پولیٹکل انتظامیہ کے خلاف شدید نعرے بازی کی۔

مظاہرین نے پولیٹکل انتظامیہ کے دفتر کے سامنے دھرنا دیتے ہوئے انصاف کا مطالبہ کیا۔ انتظامیہ نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے سیکیورٹی اہلکاروں کی بھاری نفری طلب کر لی ہے۔

ذرائع کے مطابق مشتعل مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے سیکیورٹی اہلکاروں نے ہوائی فائرنگ کی۔

یاد رہے پاراچنار میں جمعے کے روز ہونے والے دھماکے میں 6 افراد جاں بحق اور 55 سے زائد زخمی ہو گئے تھے۔

سیکیورٹی چیک پوسٹ اور قریب واقع امام بارگاہ کے درمیانی علاقے میں ہوئےدھماکے میں مبینہ طور پر ایک کار کو استعمال کیا گیا ہے جو واقعہ کے بعد تباہ شدہ حالت میں جائے حادثہ پر موجود  ہے۔ عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ مشتبہ گاڑی کے انجن کا کچھ حصہ اور دو ٹائر ہی سلامت بچے ہیں باقی گاڑی مکمل طور پر تباہ ہو چکی ہے۔

 پولیٹیکل انتظامیہ نے بھی کار دھماکے کا عندیہ ظاہر کرتے ہوئے بتایا ہے کہ دھماکے کے بعد گاڑی کے ٹکڑے دور دور تک گرے ہیں۔ جب کہ ایک درجن سے زائد گاڑیاں تباہ ہوئی ہیں۔

نمائندہ پاکستان ٹرائب کے مطابق دھماکے کے بعد چند لمحوں میں زخمیوں کی جانیں بچانے کے لئے ایثار کا خوبصورت اور قابل تقلید مظاہرہ کرتے ہوئے مقامی افراد نے 300 بوتل خون جمع کروایا۔ خون کے عطیات جمع کروائے جانے کا سلسلہ اب بھی جاری ہے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *