لاہور چیف جسٹس منصور علی شاہ نے پنجاب حکومت کو امیدوں کا مرکز بنا دیا

لاہور چیف جسٹس منصور علی شاہ نے پنجاب حکومت کو امیدوں کا مرکز بنا دیا

لاہور:چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس منصور علی شاہ نے کہا ہے کہ انشاء اللہ پنجاب سب کی رہنمائی کرے گا اور جیتے گا سارا پاکستان پنجاب کو دیکھ رہا ہے پریشر کا لفظ میری ڈکشنری میں نہیں۔

پاکستان ٹرائب کو دستیاب اطلاعات کے مطابق چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس منصور علی شاہ پنجاب جوڈیشل اکیڈمی کی تقریب سے خطاب کر رہے تھے۔

چیف جسٹس لاہور منصور علی شاہ نے کہا کہ آپ نے کہاتھاہڑتال نہیں ہو گی لیکن ہڑتالیں ہو رہی ہیں،مذاکرات سے مسائل حل ہوسکتے ہیں،ہڑتال کسی معاملے کا حل نہیں آپ نے کہا تھاہڑتال نہیں ہو گی لیکن ہڑتالیں ہو رہی ہیں۔

انھوں نے کہا کہ ہم سارے پاکستان کے مسائل حل کرتے ہیں،کیااپنا مسئلہ حل نہیں کر سکتے مذاکرت سے مسائل حل ہوسکتے ہیں ہڑتال کسی معاملے کا حل نہیں۔

چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ نے کہا کہ جب تک عدالت چلے گی نہیں تو بہتری کیسے آئے گی کسی بھی فاضل جج  سےبدتمیزی  برداشت نہیں کی جائے گی کسی جج کیخلاف شکایت ہے تو بلاروک ٹوک میرے پاس آئیں۔

انھوں نے کہا کہ ہڑتالوں سے ڈھائی سے تین لاکھ مقدمات التوا کا شکار ہوئے اعلان کے بغیر ہڑتال کرنیوالوں کیخلاف سخت کارروائی کی جائے گی ہائیکورٹ بار اعلان نہیں کرے گی تو ہڑتال نہیں ہوگی۔

منصور علی شاہ نے کہا کہ بیٹھ کر طے کریں،ہائیکورٹ بار اعلان کرے گی تو ہڑتال ہوگی آئیں،بیٹھیں اور ہڑتال سے بچنے کا طریقہ کار اپنائیں ہڑتال کلچرنظام کے لیے نقصان دہ ہے۔

لاہور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس منصور علی شاہ نے کہا ہے کہ ستمبر کےبعد سےپنجاب کی عدالتوں میں30فیصدکام نہیں ہوسکا کوشش ہے نظام بہتر سے بہتر بنایا جائے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *