امریکا کو نیوکلیئر ہتھیاربھی تباہ نہیں کر سکتے،پینٹاگون

امریکا کو نیوکلیئر ہتھیاربھی تباہ  نہیں کر سکتے،پینٹاگون

واشنگٹن: نیوکلیئر ہتھیاروں کی دوڑ،عالمی سطح پر متحرک دہشت گردوں کی کارائیوں اور ان کی جانب سے نیوکلیئر ہتھیاروں پر قبضہ کرنے کے ارادوں کے بعد ساری دنیا تشویش میں مبتلا ہے کیونکہ اگر ایسا ہو گیا تو تیسری عالمی جنگ شروع ہونے سے کوئی نہیں روک سکتا اور اگر ایسا ہوا تو دنیا میں کوئی نہیں بچے گا۔

اس کے علاوہ نیوکلیئر ہتھیار رکھنے والے ممالک کے آپس میں بڑھتے تنازعات بھی تشویش کا باعث ہیں کیونکہ روس اور امریکا جبکہ چین اور انڈیا کے تنازعات میں تیزی آتی جا رہی ہے۔

پینٹاگون ایسی کسی صورت حال سے نمٹنے کے لئے کافی عرصے سے کوششیں کر رہا ہے کیونکہ نیوکلیئر ہتھیاروں کی جنگ میں لامحدود تباہی آسکتی ہے جس سے بچاو تقریبا ناممکن ہوگا۔

اس حوالے سے پینٹاگون کے ماہرین نے ایک الیکٹرومیگنیٹک پلس ویپنز(ای ایم پی) نامی ہتھیار جو کہ ایک الیکٹرو میگنیٹک دھومز ڈے آرٹرلی شیل ہے تیار کرنے کا دعوی کیا ہے جو کسی کو بھی جانی نقصان پہنچائے بغیر تمام الیکٹرانک انفراسٹرکچر کو تباہ کر سکتا ہے۔

یہ شیلز بغیر کسی جانی نقصان کے الیکٹرانک حملوں کو روک لیں گے جس سے دشمن کی کمان،کنٹرول،مواصلات،کمپیوٹنگ اور انٹیلی جنس سسٹم تباہ ہو جائے گا اور وہ کوئی بھی کاروائی کرنے کے قابل نہیں رہے گا۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ اس کا سب سے بڑا فائدہ یہ ہے کہ اس سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوگا البتہ تمام بجلی کی مواصلات تباہ ہو جائیں گی۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *