اب مجرموں کو پکڑنا مشکل ہی نہیں ناممکن ہوگا

اب مجرموں کو پکڑنا مشکل ہی نہیں ناممکن ہوگا

نیویارک: جیسے جیسے جرائم کی روک تھام کے لئے نت نئی چیزیں ایجاد کی جارہی ہیں اور ٹیکنالوجی استعمال کی جارہی ہے اسی طرح جرائم پیشہ افراد کے لئے بھی چیزیں خود بخود وجود میں آجاتی ہیں۔

یہ بھی دیکھا گیا ہے کہ ٹیکنالوجی کا استعمال اتنا قانون نافذ کرنے والے ادارے نہیں کرتے جتنا جرائم پیشہ افراد کرتے ہیں۔

مجرموں کی سرگرمیوں پر نظر رکھنے کے لئے جگہ جگہ لگائے جانے والے سی سی ٹی وی کیمرے اب کارگر نہیں ہوں گے کیونکہ ان کو دھوکہ دینے والے چشمے مارکیٹ میں آچکے ہیں۔

رفلیکٹیکلز نامی یہ چشمے اپنے پہننے والے کے سارے چہرے کو ایک روشنی سے ڈھانپ لیتے ہیں جس سے کیمرے میں ان کی کوئی ہلکی سی شبہی تک نہیں آ سکتی۔

اس کو بنانے والوں کا دعوی ہے کہ اس میں جو میٹریل استعمال کیا گیا ہے وہ صرف لیبارٹریز میں استعمال ہوتا ہے اور عموما گوسٹ ڈھونڈنے کے لئے تیار کیا جاتا ہے۔

اس چشمے کو پہننے کے بعد سیلفی،گروپ فوٹو نہیں لیا جا سکتا اور کوئی بھی چھپ کر تصویر نہیں بنا سکتا۔

یہ نادر چشمہ نہایت کم قیمت ہے اور صرف 96 ڈالرز میں خریدا جا سکتا ہے یعنی سب کی پہنچ میں ہے۔

ماہرین کے مطابق اس نئی ایجاد سے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو کوئی فائدہ نہیں پہنچ سکتا اور یہ ان کے کسی کام کی نہیں ہے البتہ جرائم پیشہ افراد کے لئے اس میں بہت کشش ہے کیونکہ اس کے استعمال سے وہ پہچانے نہیں جا سکیں گے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *