اوباما کی بیٹی ویٹرس بن گئیں

اوباما کی بیٹی ویٹرس بن گئیں

واشنگٹن:دنیا میں برسراقتدارطاقت ور ترین شخص صدربارک اوباما کی بیٹی نے ہوٹل میں نوکری کے دنیا بھرمیں لینڈ لارڈز کیلئےمثال قائم کردی ہے۔

ساشا اوباما نے15سال کی عمر میں وائٹ ہاؤس کی آسائشوں کو چھوڑ کر ایک سی فوڈ ریسٹورنٹ میں کام شروع کر دیا ہے۔

یہ علاقہ اوباما فیملی کا گرمیوں کی چھٹیوں میں پسندیدہ مقام ہے۔

بوسٹن ہیرلڈ کی رپورٹ کے مطابق ساشا جن کا پورا نام نتاشا ہے کے ساتھ ریستوارن میں خفیہ اداروں کے چھ ارکان بھی موجود ہوتے ہیں۔

بتایا جارہا ہے کہ سکیورٹی کیلئے تعینات افسران بھی  اوباما کی بیٹی کے کام میں ہاتھ بٹاتے ہیں تاہم وائٹ ہاؤس کی جانب سے کوئی بیان سامنے نہیں آیا۔

ساشا اوباما نہ صرف ٹیک اوے کاؤنٹر پر کام کرتی ہیں بلکہ میزوں پر انتظار کرنا اور ریستوران کے کھانے کے وقت سے قبل تیاریاں مکمل کرنا بھی شامل ہیں۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *