ترکی:ناکام بغاوت میں شامل اہلکاروں کی تفصیل

ترکی:ناکام بغاوت میں شامل اہلکاروں کی تفصیل

انقرہ: ترکی کی مسلح افواج نے کہا ہے کہ پندرہ جولائی کی شب ناکام فوجی بغاوت میں آٹھ ہزار651 فوجی اہلکاروں نے حصہ لیا تھا۔

کل ترک فوج کا ایک اعشاریہ پانچ فیصد اہلکاروں بننے والے باغی اہلکاروں نے صدر اردوان کی اپیل پر عوامی مداخلت کے بعد ہتھیار ڈالے تھے۔

ترک افواج کے مطابق باغیوں نے پندرہ جولائی کی شب آئینی جمہوری حکومت کے خلاف ناکام بغاوت میں 35 لڑاکا طیارے، 37 ہیلی کاپٹر، 74 ٹینک، 246 بکتربند اور تین سمندری جہاز استعمال کئے تھے۔

دریں اثنا ترک وزارت داخلہ نے کہا ہے کہ ناکام بغاوت کے شبہے میں ابتک آٹھ ہزار ایک سو تیرہ افراد کو گرفتا کیا جاچکا ہے۔ تاہم ترکی کے نجی چینل نے دعویٰ کیا ہے کہ ابتک گرفتار کئے جانے والے افراد کی تعداد 15ہزار سے تجاوز کرگئی ہے جن میں سے دس ہزار فوجی شامل ہیں۔

یاد رہے کہ اس سے قبل ترک فوجی سربراہ خلوصی آکار کے حوالے سے بھی یہ بیان سامنے آچکا ہے کہ بغاوت کی رات انہیں حراست میں لینے والوں نے امریکا میں مقیم فتح اللہ گلن سے بات کرنے کی پیشکش کی تھی۔

ترک فوج کے پریس اور پبلک ریلیشنز ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے جاری کردہ تفصیلات کے مطابق مذکورہ فوجیوں میں سے 124 کیڈٹس تھے جب کہ 1676 اپنی باقاعدہ ذمہ داریوں پر تعینات تھے۔ بغاوت کے ضمن میں اب تک 120 اعلی افسران کو حراست میں لے کر تفتیشی عمل کا حصہ بنایا گیا ہے جو کل جنرلز کی تعداد کجا ایک تہائی ہیں۔

بغاوت کے دوران تقریبا 246 سویلینز اور سیکورٹی اہلکار مارے گئے تھے جب کہ 2 ہزار سے زائد زخمی ہوئے تھے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *