شام میں 2 خود کش حملے 50 سے زائد جاں بحق سینکڑوں زخمی

شام میں 2 خود کش حملے 50 سے زائد جاں بحق سینکڑوں زخمی

دمشق:ترکی کی سرحد کے قریب شام کے شہر قامشلی میں یکے بعد دیگرے ہونے والے 2 خودکش حملوں کے نتیجے میں 50 سے زائد افراد جاں بحق جبکہ 100 سے زائد زخمی ہوگئے ہیں۔

دی نیوز ٹرائب کو ومصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق دھماکے اتنے شدید تھے کہ سرحد پار ترکی کے شہر نوسے بن میں دکانوں اور گھروں کی کھڑکیوں کے شیشے ٹوٹ گئے اور وہاں بھی 2 افراد زخمی ہوگئے۔

دھماکے ترکی کے کرد سرحدی شہر نوسے بن کے قریب سرحد کے دوسری طرف شامی کرد شہر قامشلی میں ہوئے ہیں جن میں ڈیموکریٹک یونین پارٹی سمیت کردوں کی دیگر وزارتوں کے دفاتر کو نشانہ بنایا گیا ہے۔

ابتدائی اطلاعات کے مطابق جڑواں خودکش حملوں کے نتیجے میں 40 افراد جاں بحق جبکہ 100 سے زائد زخمی ہوگئے ہیں۔

دھماکوں کی شدت کے باعث دونوں سرحدی شہر پوری طرح لرز گئے اور ترکی کے شہر نوسے بن کے گھروں اور دکانوں کی کھڑکیوں کے شیشے ٹوٹ گئے جکہ وہاں پر بھی 2 افراد زخمی ہوگئے۔

دھماکوں کے نتیجے میں جاں بحق ہونے والوں میں عام لوگوں کے ساتھ قانون نافذ کرنے والے اداروں کے افراد کی بڑی تعداد بھی شامل ہے۔

شدت پسندتنظیم داعش نے شامی شہر میں ہونے والے دھماکوں کی ذمہ داری قبول کرلی ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ سال ہونے والی جھڑپوں کے نتیجے میں کردوں نے شدت پسند تنظیم داعش کے قبضے سے کردستان کا کافی علاقہ خالی کرالیا تھا جبکہ داعش سے ان کی تاحال جنگ جاری ہے۔

داعش کردش پارٹی ڈیموکریٹک یونین پارٹی اور اس کے اتحادیوں کے خلاف حساکا شہر میں جنگ لڑ رہی ہے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *