رینجرز نےکراچی سے ہاتھ اٹھا لیا

رینجرز نےکراچی سے ہاتھ اٹھا لیا

کراچی:پاکستان کے معاشی حب کراچی میں رینجرز کے اختیارات ختم ہونے کے بعد شہرکی سکیورٹی سندھ پولیس کے پاس منتقل ہو گئی ہے۔

گزشتہ روزرینجرز کے اختیارات ختم ہونے کےبعد کہا گیا تھا مزید چوبیس گھنٹے میں سندھ حکومت نے فیصلہ نہ کیا تو اہم مقامات سمیت شہر سے سکیورٹی اہلکاروں کو واپس بلالیا جائے گا۔

چوبیس گھنٹے گزرنے کے بعد شہرقائد کے داخلی اور خارجی راستوں سے رینجرز کے دستے ہٹادیے گئے ہیں جبکہ شہر میں رینجرزکی جانب سے اسنیپ چیکنگ اور گشت بھی روک دی گئی ہے۔

گاڑیوں کے پاس موجود اہلکار کسی قسم کی چیکنگ یا تلاشی نہیں لے رہے جبکہ حساس مقامات سے بھی رینجرز کوجلد واپس بلائے جانے کاامکان ہے۔

اختیارات ختم ہونے کے بعد رینجرزاہلکار شہر میں چھاپے اور گرفتاریاں نہیں کرسکتے اور نہ اسنیپ چیکنگ کے مجازہے۔

دوسری جانب سندھ حکومت نے کہا ہے کہ اختیارات صرف کراچی کیلئے دیے گئے تھے اندرون سندھ کیلئے نہیں۔

 رینجرز اختیارات میں توسیع کرنی ہے یانہیں اس کا فیصلہ پارٹی قیادت سے مشورے کے بعد کیا جائے گا۔

بتایا جارہا ہے کہ پاکستان پیپلز پارٹی کےشریک چیئرمین آصف علی زرداری نے سہیل انورسیال اور قائم علی شاہ کورینجرز کے معاملےمیں ملاقات کیلئے دبئی طلب کرلیا ہے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *