“پاکستان تنہائی کا شکار ہے”فرحت اللہ بابر

“پاکستان تنہائی کا شکار ہے”فرحت اللہ بابر

اسلام آباد:سینیٹر فرحت اللہ بابر نے کہا ہے کہ اداروں کی باہمی چپقلش کی وجہ سے پاکستان بین الاقوامی سطح پر تنہائی کا شکار ہوتا جا رہا ہے۔

دی نیوز ٹرائب کے نمائندہ اسلام آباد کے مطابق سینیٹر فرحت اللہ بابر سینٹ میں اظہار خیال کر رہے تھے۔

سینیٹر فرحت اللہ بابر نے کہا کہ امریکا سےتعلقات کی نئی گائیڈ لائنزپرآئی ایس پی آرکو بھی مدعو کرناہوگا تاکہ کسی قسم کوئی غلط فہمی نہ رہے۔

ملک کی موجودہ صورتحال پر بات کرتے ہوئے سینیٹر فرحت اللہ بابر نے کہا کہ تمام سیاسی جماعتوں اورصوبوں کےنمایندوں پرمشتمل پارلیمانی کمیٹی بناناہوگی تاکہ جمہوریت کو لاحق خطرات ختم ہوں۔

پاکستان کی خارجہ پالیسی اور ملکی اداروں کے درمیان جاری چپقلش پر بات کرتے ہوئے فرحت اللہ بابر نے کہا کہ ادارے ساتھ نہ ہوں تو کیسےآپ دوسرے ممالک سےتعلقات کی گائیڈ لائنزپرعمل کرائیں گے۔

سینیٹر فرحت اللہ بابر نے کہا کہ بھارت،افغانستان،کشمیر اور نیوکلیئرمعاملےپرخارجہ پالیسی فارن آفس میں نہیں بلکہ جی ایچ کیو میں بن رہی ہے۔

سینٹ میں اظہار خیال کرتے ہوئے فرحت اللہ بابر نے کہا کہ پہلےملک میں ملٹری اورسول قیادت کےتعلقات کی نئی گائیڈ لائنزمرتب کرناہوں گی پھر ملک سے باہر کے معاملات دیکھے جائیں گے۔

یاد رہے کہ سینیٹر فرحت اللہ بابر سینٹ میں اظہار خیال کر رہے تھے۔

ویب ڈیسک

یہ پاکستان ٹرائب کا آفیشل ویب ڈیسک اکاؤنٹ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *